Thursday , January 24 2019

سفارت خانہ پر راکٹ حملے کے بعد شام میں روس کی زبردست ترین بمباری

بیروت ۔ 13 ۔ ا کتوبر (سیاست ڈاٹ کام) روس نے آج کہا کہ اس نے آج شام میں اب تک کے شدید ترین فضائی حملے کئے ہیں۔ یہ جہادیوں کے روسی سفارت خانہ واقعہ دمشق پر راکٹ حملے کی انتقامی کارروائی ہے۔ روس کی شامی تنازعہ میں شمولیت کے ڈرامائی اثرات دیکھے جارہے ہیں۔ امریکہ نے روس کے ساتھ تعاون سے انکار کردیا ہے۔ وزیر دفاع روس نے کہا کہ روسی فضائیہ نے گزشتہ 24 گھنٹے کے دوران شام میں دہشت گردوں کے 86 نشانوں پر حملے کئے ہیں۔ ایک ہی دن میں یہ 30 ستمبر کو بمباری کی مہم کے آغاز کے بعد سے اب تک کی زبردست ترین بمباری ہے۔ دولت اسلامیہ کے کئی ٹھکانوں پر حملے کئے گئے ۔ امریکہ اور اس کے حلیفوں کا کہنا ہے کہ عراق اور شام میں دولت اسلامیہ کے خلاف ان کی فضائی جنگ ان کے منصوبوں کے مطابق جاری رہے گی۔ روس مغربی حمایت یافتہ اعتدال پسند باغیوں پر حملے کر رہا ہے اور چاہتاہے کہ صدر شام بشارالاسد کی حکومت کو استحکام فراہم کرے۔

TOPPOPULARRECENT