Tuesday , June 19 2018
Home / شہر کی خبریں / سفید راشن کارڈس پر دیگر خدمات برخاست ، صرف چاول کی سربراہی

سفید راشن کارڈس پر دیگر خدمات برخاست ، صرف چاول کی سربراہی

غریب خاندانوں کیلئے فوائد سے زائد آمدنی والے افراد کا استفادہ ، 4 لاکھ راشن کارڈس منسوخ

30 اپریل تک نئے راشن کارڈس کی اجرائی
اسمبلی میں وزیر سیول سپلائیز ایٹالہ راجیندر کا بیان

حیدرآباد۔ 25 مارچ (آئی این این؍ سیاست نیوز) وزیر فینانس و سیول سپلائیز ایٹالہ راجیندر نے آج واضح طور پر کہا کہ قانون غذائی ضمانت کے تحت جاری کئے جانے والے راشن کارڈس صرف چاول کی سربراہی کیلئے مخصوص ہوں گے جن کا کسی اور مقصد کے لئے استعمال نہیں کیا جاسکے گا۔ انہوں نے کہا کہ ماضی میں غریب خاندانوں کی طرف سے آروگیہ سری کے تحت طبی فوائد، طلبہ کیلئے اسکالرشپس اور دیگر سرکاری اسکیمات کے علاوہ آٹا، خوردنی تیل، شکر، کیروسین وغیرہ جیسی ضروری اشیاء کے حصول کیلئے سفید راشن کارڈس کا استعمال کیا جاتا تھا لیکن اب ایسا نہیں کیا جاسکے گا۔ قبل ازیں عوام دیگر خدمات سے استفادہ کے لئے سفید راشن کارڈس استعمال کررہے تھے جو صحیح نہیں تھا۔ اسمبلی میں وقفہ صفر کے دوران ارکان کی طرف سے اٹھائے گئے مختلف سوالات پر ایٹالا راجیندر نے جواب دیا کہ کانگریس کے دور میں عوام نے سفید راشن کارڈس کا غلط استعمال کیا۔ اکثر افراد نے طبی سہولتوں اور فیس ری ایمبرسمنٹ اور دیگر خدمات سے استفادہ کیا لیکن چاول حاصل نہیں کئے گئے۔ بعدازاں پتہ چلا کہ سفید کارڈ رکھنے والے اکثر افراد کی آمدنی معلنہ حد سے کہیں زیادہ تھی چنانچہ حیدرآباد، رنگاریڈی اور میڑچل میں کم سے کم 4,06,397 راشن کارڈس منسوخ کردیئے گئے۔ ایٹالہ راجیندر نے واضح کیا کہ نئے راشن کارڈس 30 اپریل سے قبل استفادہ کنندگان میں تقسیم کردیئے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ 89,713 درخواستوں کا جائزہ لینے کے بعد 77,100 نئے راشن کارڈس جاری کئے جارہے ہیں۔ دیگر 1.66 لاکھ درخواستوں کا بہت جلد جائزہ لیا جائے گا۔ ایٹلا راجیندر نے اسمبلی میں آج شہر کے ارکان کی طرف سے اٹھائے گئے سوالات پر جواب دیتے ہوئے کہا کہ جی ایچ ایم سی حدود کے علاوہ اضلاع سنگاریڈی اور میڑچل میں 4,06,397 بوگس راشن کارڈس منسوخ کردیئے گئے۔ ریاستی حکومت 2015ء سے غذائی طمانیت اسکیم پر عمل آوری کررہی ہے۔ وزیر سیول سپلائیز نے کہا کہ حکومت کو محض مارواڑی کی دوکان کی طرح کام نہیں کرنا چاہئے بلکہ عوام کی شکایات کا ازالہ کرنے کے موقف میں ہونا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت ریاست بھر میں 82.64 لاکھ راشن کارڈس فراہم کررہی ہے۔

TOPPOPULARRECENT