Saturday , June 23 2018
Home / شہر کی خبریں / سماجی جہدکاروں کے ساتھ حکومت کا متعصبانہ رویہ

سماجی جہدکاروں کے ساتھ حکومت کا متعصبانہ رویہ

مزدور سنگھت سمیتی کے جلسہ میں گرفتاری کی مذمت ، ورا ورا راؤ
حیدرآباد ۔ 19 ۔ فروری : ( سیاست نیوز ) : مصنف ورا ورا راؤ نے کہا کہ بی جے پی حکومت اپنی ساکھ کو برقرار رکھنے کے لیے من مانی رویہ اختیار کررہی ہے جس کے لیے آج ملک بھر میں تمام طبقات کی جان و مال کو خطرہ لاحق ہے ۔ انہوں نے جھارکھنڈ ریاست میں مسٹر دامودھر توری آل انڈیا سکریٹری مزدور سنگھت سمیتی کی جانب سے منعقدہ جلسہ میں گرفتار کرنے کی شدید مذمت کی اور کہا کہ ان پر پولیس نے سنگین مقدمات بھی عائد کئے ہیں ۔ وہ آج یہ بات پریس کلب سوماجی گوڑہ میں پریس کانفرنس کے دوران کیا ۔ جس میں پی ایس راجو ، رتنا مالا نیشنل کمیٹی ممبر ، ریویندرا اور دوسرے موجود تھے ۔ سماجی جہد کار ورا ورا راؤ نے یہ بھی کہا کہ جھارکھنڈ میں حکومت بی جے پی کی ہے جو انصاف پسند قائدین کے ساتھ کھلواڑ کرتے ہوئے انہیں ہراساں کرنے کا بیڑہ اٹھایا ہے ۔ جھارکھنڈ کا ایک ایسا علاقہ جہاں پر عوام بڑی پریشانی کے عالم میں زندگی بسر کررہے ہیں ۔ کھانے و پینے کے مسائل ہیں یہاں تک کہ لوگ راشن اور دیگر غذائی اجناس سے پریشان ہیں اور ان کے ہاں آدھار کارڈ تک نہیں ہے ۔ اس صورتحال میں وہ اپنا کس قدر تحفظ کرسکیں گے ۔ اور پولیس کا حال یہ ہے کہ اسکولس سے واپس ہونے والے طلباء پر شک کی بنیاد پر جو یونیفارم پہنے ہوئے ہوتے ہیں گرفتار کرلیتی ہے ۔ انسانی حقوق و انصاف کے لیے کام کرنے والوں کے ساتھ مرکزی حکومت کا یہ طریقہ ہندوستان کی تاریخ میں دیکھنے کو نہیں ملتا ۔ پولیس اور حکومت سب کچھ دیکھنے کے باوجود وہاں پاؤں کے نیچے پانی پہنچانے کے عمل سے باز آجائیں ۔ انہوں نے حال ہی میں گوری لنگیش قتل کی شدید مخالفت کی ۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستان کی ایک تاریخ ہے جہاں سب نے مل جل کر انگریزوں کی غلامی سے چھٹکارا دلوایا اگر بی جے پی حکومت اس ملک کی عوام کو غلامی میں ڈھکیلنا چاہتی ہے تو اس کو برداشت نہیں کیا جائے گا ۔ اس موقع پر رتنا مالا نے بھی مخاطب کیا ۔۔

TOPPOPULARRECENT