Tuesday , December 18 2018

سمنٹ کی قیمتوں میں کمی سے انکار

حیدرآباد 22 جولائی (سیاست نیوز) ریاست تلنگانہ اور آندھراپردیش میں کسی صورت میں بھی سمنٹ کی قیمتوں میں کمی نہیں ہوگی۔ آج یہاں سمنٹ کمپنیوں کے مالکین کی اسوسی ایشن نے اس بات کا انکشاف کیا اور بتایا کہ سمنٹ کی قیمتوں کے تعلق سے گزشتہ کچھ دنوں سے زبردست ہنگامہ آرائی و احتجاج کیا جارہا ہے کیونکہ سمنٹ کے فی تھیلہ سمنٹ کی قیمت 200 روپئے ت

حیدرآباد 22 جولائی (سیاست نیوز) ریاست تلنگانہ اور آندھراپردیش میں کسی صورت میں بھی سمنٹ کی قیمتوں میں کمی نہیں ہوگی۔ آج یہاں سمنٹ کمپنیوں کے مالکین کی اسوسی ایشن نے اس بات کا انکشاف کیا اور بتایا کہ سمنٹ کی قیمتوں کے تعلق سے گزشتہ کچھ دنوں سے زبردست ہنگامہ آرائی و احتجاج کیا جارہا ہے کیونکہ سمنٹ کے فی تھیلہ سمنٹ کی قیمت 200 روپئے تا 230 روپئے تھی لیکن سمنٹ کمپنیوں نے اچانک سمنٹ فی تھیلہ کی قیمت میں زائداز 100 روپئے کا اضافہ کردیا جس کے باعث بڑے پیمانے پر تنقیدوں کا آغاز ہوگیا۔ لیکن آج شہر حیدرآباد میں سمنٹ کمپنیوں کے مالکین کی اسوسی ایشن کا ایک اہم اجلاس منعقد ہوا اور کہاکہ ریاست تلنگانہ اور آندھرا میں سمنٹ کمپنیاں نقصانات سے دوچار ہیں لہذا فی تھیلہ سمنٹ کی قیمت 330 روپئے ادا کرنا ضروری ہے۔ سمنٹ کمپنیوں کے مالکین کی

اسوسی ایشن نے سمنٹ کی قیمتوں میں اضافہ کو ناگزیر قرار دیتے ہوئے کہاکہ سمنٹ کمپنیوں کو درپیش نقصانات کی روشنی میں ہی سمنٹ کی قیمت میں اضافہ کرنا ضروری ہوگیا۔ ان سمنٹ کمپنی مالکین کا ادعا یہ ہے کہ سمنٹ کمپنیاں درکار سمنٹ کے تھیلوں کی تیاری (درکار سمنٹ کے مطالبہ کو) پورا نہیں کرپارہی ہیں۔ لہذا ناگزیر حالات کے باعث سمنٹ کی قیمتوں میں اضافہ کیا گیا۔ سمنٹ کمپنیوں کے مالکین کی اسوسی ایشن کے مطابق سمنٹ کمپنیاں اپنے ملازمین کو تنخواہیں دینے کے موقف میں بھی نہیں ہیں اور اس طرح سمنٹ کمپنیوں کی حالت بہت ہی ابتر ہوچکی ہے۔ ان مالکین نے سمنٹ قیمتوں میں اضافہ پر بعض بلڈرس کی جانب سے ممخالفت کرتے ہوئے سمنٹ کا بائیکاٹ کررہے ہیں اور مالکین سمنٹ کمپنیوں نے بتایا کہ بلڈرس کے ادعا جات میں کوئی سچائی یا حقیقت پسند نہیں تھی۔

TOPPOPULARRECENT