سمیع اپنی بیوی اور ملک کو دھوکہ نہیں دے سکتا

ہندوستان کے سابق کرکٹ کیپٹن دھونی کی تائید

نئی دہلی۔ 13 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) سابق ہندوستانی کرکٹ کیپٹن مہیندر سنگھ دھونی نے جاریہ تنازعہ میں اپنے ساتھی

نے جاریہ تنازعہ میں اپنے ساتھی کھلاڑی محمد سمیع کی تائید کرتے ہوئے یوپی کے متوطن بولر کی اپنی بیوی حسین جہاں کے ساتھ دھوکہ دہی کے الزامات کے سلسلے میں اپنی خاموشی توڑتے ہوئے ایک انٹرویو میں کہا کہ جہاں تک میں جانتا ہوں، سمیع ایک عظیم انسان ہیں۔ وہ اپنی بیوی اور ملک کو دھوکہ نہیں دے سکتے۔ یہ سمیع کا نجی معاملہ ہے اور مجھے اس بارے میں زیادہ تبصرہ نہیں کرنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ وہ 27 سالہ بنگال پیسر پر عائد الزامات پر یقین نہیں کرتے، تاہم سمیع کے اپنی بیوی کو دھوکہ دینے کے الزامات اور میچ فکسنگ کے الزامات پر بھی ان کو یقین نہیں ہے۔ اگر یہ درست ہے تو یہ اطلاع پہلے کیوں نہیں آئی تھی۔ جب رشتہ ناخوشگوار ہے تو اس کی بیوی خاموش کیوں ہے۔ ایک تحقیقاتی ٹیم تشکیل دی گئی ہے، اسے اپنا کام کرنے دیجئے۔ سمیع پر ایسے الزامات ناقابل قبول اور بدنام کرنے والے ہیں۔ سمیع ایک ذہین، محنتی کرکٹ کھلاڑی ہیں، میں ان کی شخصی رشتہ داری کو پریشانی میں مبتلا کرنا نہیں چاہتا۔ ایسا معلوم ہوتا ہے کہ ان کی بیوی کی جانب سے ایسے الزامات ثابت ہونے تک شرانگیزی پر مبنی سمجھے جاسکتے ہیں۔ سمیع کے خسر، حسین جہاں کے والد محمد حسن نے بھی سمیع کی تائید کرتے ہوئے کہا ’’ہم حسین جہاں اور محمد سمیع کے درمیان تنازعہ کی وجوہات سے ناواقف ہیں۔ ہمیں ذرائع ابلاغ کے توسط سے یہ اطلاعات ملی، صرف سمیع اور حسین ہی کہہ سکتے ہیں کہ درحقیقت کیا واقعہ ہوا تھا۔ ہم اس کے بارے میں نہیں جانتے۔ سمیع ایک اچھا شخص ہے، وہ کم بات کرتا ہے، ہم اس پر شک نہیں کرتے۔ صرف خدا ہی جانتا ہے کہ یہ بھدا موڑ کیوں پیدا ہوا۔

TOPPOPULARRECENT