Thursday , January 18 2018
Home / شہر کی خبریں / سنت کی بنیاد پر غذا کے استعمال سے اچھی صحت کی برقراری

سنت کی بنیاد پر غذا کے استعمال سے اچھی صحت کی برقراری

محبوب حسین جگر ہال میں ڈاکٹر یاسرعرفات کا طب نبویؐ پر لکچر

محبوب حسین جگر ہال میں ڈاکٹر یاسرعرفات کا طب نبویؐ پر لکچر
حیدرآباد۔19جنوری(سیاست نیوز ) دور حاضر کی بیماریوں کے طب نبویؐ کے ذریعہ علاج پر اظہار خیال کرتے ہوئے بڑے حکیم صاحب کے فرزند ڈاکٹر یاسر عرفات نے انجیر‘ کلونجی‘ شہید ‘ زیرا‘ انگور‘ میتھی‘سرمہ کو طب نبوی ؐ کا اہم حصہ قراردیا جو غذا بھی ہے اور دوا بھی۔ ادارہ سیاست کے زیر اہتمام محبو ب حسین جگر میں حال میںمنعقد ہ لکچر کے دوران ڈاکٹر یاسر عرفات نے غذا میںبے اعتدالی کوپیٹ کے امراض میںاضافہ کا ذریعہ قراردیا اور کہاکہ اللہ کے رسول ؐ کی سنت کے مطابق کھانے کا استعمال انسان کو امراض سے محفوظ رکھنے کا بہترین ذریعہ ہے۔ انجیر کے استعمال سے بواسیر‘ جوڑ وں کا درد ختم کیا جاسکتا تھا بشرطیکہ انجیر کو ہدایت کے مطابق استعمال کیا جائے ۔ انہوں نے انگور اور منقیٰ کے استعمال کو بھی مفید قراردیا اور کہاکہ انگور اور منقیٰ کا استعمال بھی طب نبویؐ کا حصہ ہے جس کے استعمال سے مختلف امراض کو دور کیاجاسکتا ہے۔ انہوںنے اعصابی درد کو دور کرنے کے منقیٰ استعمال کرنے کا مشورہ دیا جو طبی نبوی ؐ کا حصہ ہے۔ ڈاکٹر یاسر عرفات نے اپنے لکچر میںطبی نبوی کے فوائد اور استعمال کے متعلق تفصیلات پیش کرتے ہوئے میتھی کے استعمال کو بھی مفید قرار دیا اور کہاکہ اللہ کے رسول ؐ نے میتھی کے متعلق بتایا ہے کہ اس کے استعمال سے ہونے والے فوائد کے بارے میںاگر لوگوں کو معلوم ہوجائے تو لوگ سونا کے عوض میتھی خریدنے کو اہمیت دیں گے۔انہوں نے سرمہ کے استعمال کو انکھوں کے امراض کو ختم کرنے کا بہترین بتایا اور کہاکہ دماغی امراض اور سردرد کو دور کرنے کے لئے مہندی کااستعمال کرنے کا مشورہ دیا۔ ڈاکٹر یاسر عرفات نے زیرہ کے استعمال پر کہاکہ جلد کی مختلف بیماریوں کو زیر ہ استعمال کرکے ختم کیا جاسکتا ہے۔انہوں نے طبی نبویؐ پر لکھی گئی کتاب کے مطالعے کا مشورہ دیا جو ہمیں مختلف اور مہلک امراض سے محفوظ رکھنے میں کارآمد ہے۔ ڈاکٹر یاسر عرفات نے کہاکہ اللہ کے رسول ؐ کی سیرت مبارکہ کا مطالعہ کرنے پر ہمیںانداز ہ ہوجائے گا اپنی سنتوں پر عمل کرنا کس حد تک ہمارے لئے فائدہ مند ہے۔ انہوں نے میدان جنگ میںزخمی ہونے پر زخموں سے بہتے ہوئے خون کو روکنے کے لئے پانی سے دھونے سے لیکر ٹاٹ کو ٹکڑا جلاکر زخموں پر لگانے اور خون کے بہائو کو روکنے کا کامیاب علاج کرنے کے واقعات کا بھی اس موقع پرذکر کیا۔ انہوں نے حجامہ کو طبی نبویؐ کا اہم حصہ قراردیتے ہوئے خون کے انجماد سے پیدا ہونے والی بیماریوں کو نکالنے اور ختم کرنے میں حجامہ موثر اور کارآمد علاج ثابت ہوتا آرہا ہے۔انہوں نے مزید کہاکہ حجامہ کے ذریعہ جسم کی زہریلی چیزوں کو باہرنکالا جاسکتا ہے تندرست وصحت مند زندگی گذارنے کے لئے پاک وصاف رہنے کو لازمی قراردیا ۔ انہوں نے کہاکہ مذہب اسلام میں غسل کی اہمیت اسی وجہہ سے ہے کہ وہ انسان کو ہمیشہ پاک وصاف رکھتا ہے۔انہوں نے طبی نبویؐ کو اسلامک میڈیسن قراردیا جس کا استعمال ہر مرض کے علاج میںمفید ہے۔ ڈاکٹر مشتا ق احمد کیپ ٹائون یونیورسٹی ساوتھ افریقہ ‘ ڈاکٹر معین انصاری نے بھی مخاطب کیا ۔ لکچر کا آغاز قاری محمد عبدالذیشان کی قرات کلام پاک سے ہوا اور کاروائی ڈاکٹر یسریٰ فاطمہ نے چلائی۔ ڈاکٹر غوث الدین نے مہمانو ںکا استقبال کیا۔ لکچر کے آغازسے قبل تمام مہمانوں کو ادارے کی جانب سے تہنیت بھی پیش کی گئی۔

TOPPOPULARRECENT