Wednesday , December 12 2018

سنسنی خیز اغوا کیس چند گھنٹوں میں حل

حیدرآباد۔ /11 مارچ (سیاست نیوز) ہائیکورٹ کے قریب پیش آئے دو سالہ کمسن لڑکی کے سنسنی خیز اغواء کے کیس کو چارمینار پولیس اندرون چند گھنٹے حل کرتے ہوئے مغویہ لڑکی کو اغواء کنندے کے چنگل سے بچالیا ۔ چارمینار پولیس کی ایک خصوصی ٹیم نے گنٹور کے علاقے براڈی پیٹ میں واقع ایک مکان میں دھاوا کرتے ہوئے اغواء کنندے ہنمنت راؤ کو گرفتار کرلیا ۔ تف

حیدرآباد۔ /11 مارچ (سیاست نیوز) ہائیکورٹ کے قریب پیش آئے دو سالہ کمسن لڑکی کے سنسنی خیز اغواء کے کیس کو چارمینار پولیس اندرون چند گھنٹے حل کرتے ہوئے مغویہ لڑکی کو اغواء کنندے کے چنگل سے بچالیا ۔ چارمینار پولیس کی ایک خصوصی ٹیم نے گنٹور کے علاقے براڈی پیٹ میں واقع ایک مکان میں دھاوا کرتے ہوئے اغواء کنندے ہنمنت راؤ کو گرفتار کرلیا ۔ تفصیلات کے بموجب وشنو ساکن پرانا پل درگا نگر جو چائے کاٹھیلے بنڈی پر روزانہ ہائیکورٹ کے قریب کاروبار کرتا ہے۔ وشنو کو جملہ چار بچے ہیں اور وہ اپنی دو سالہ لڑکی مونیکا کو اپنے ساتھ آج صبح لے آیا اور وہ کاروبار میں مصروف تھا ۔ دوپہر میں مونیکا کو ایک شخص نے بسکٹ دینے کے بہانے اسے راغب کیا اور بعد ازاں کچھ ہی دیر میں وہ لڑکی کا اغواء کرکے فرار ہوگیا ۔ مونیکا اچانک لاپتہ ہوجانے پر اس کے باپ نے ہائیکورٹ کے اطراف واکناف علاقے میں اس کی تلاش کی ۔ لیکن اس کا پتہ نہ چل سکا جس کے سبب وشنو چارمینار پولیس سے اس سلسلے میں ایک شکایت درج کروائی ۔ اغواء کی شکایت موصول کرنے کے بعد چارمینار پولیس نے ہائیکورٹ کے قریب نصب کئے گئے سی سی ٹی ویز کا تجزیہ کیا جس میں اغواء کنندے کی شناخت ہنمنت راؤ کی حیثیت سے کی گئی اور اغواء کے بعد لڑکی کو آٹو میں منتقل کئے جانے کی حرکت کو بھی سی سی ٹی وی میں قید کیا گیا ۔ اسسٹنٹ کمشنر آف پولیس چارمینار مسٹر کے اشوک چکرورتی نے چارمینار پولیس اسٹیشن کے انسپکٹر مسٹر یادگیری پر مشتمل ایک خصوصی ٹیم کو گنٹور روانہ کیا اور ہنمنت راؤ کا کامیاب طور پر پتہ لگالیا ۔ اغواء کنندہ کو اس کے مکان واقع براڈی پیٹ میں گرفتار کرلیا گیا اور مغویہ دو سالہ مونیکا کو اس کے چنگل سے رہا کرتے ہوئے اسے حیدرآباد منتقل کیا ۔

TOPPOPULARRECENT