Tuesday , January 23 2018
Home / شہر کی خبریں / سنٹرل حج کمیٹی کی ویب سائیٹ پر تلنگانہ ندارد

سنٹرل حج کمیٹی کی ویب سائیٹ پر تلنگانہ ندارد

حیدرآباد۔/21مارچ، ( سیاست نیوز) آندھرا پردیش ریاست کی تقسیم اور تلنگانہ ریاست کی تشکیل کو 9ماہ مکمل ہوچکے ہیں لیکن آج تک سنٹرل حج کمیٹی نے تلنگانہ ریاست کو قبول نہیں کیا ہے۔ حج کمیٹی آف انڈیا کی ویب سائیٹ پر تلنگانہ ریاست کو علحدہ شناخت نہیں دی گئی اور صرف آندھرا پردیش کا شمار کیا گیا ہے۔ ریاست کی تقسیم کے بعد تلنگانہ اور آندھرا پردیش

حیدرآباد۔/21مارچ، ( سیاست نیوز) آندھرا پردیش ریاست کی تقسیم اور تلنگانہ ریاست کی تشکیل کو 9ماہ مکمل ہوچکے ہیں لیکن آج تک سنٹرل حج کمیٹی نے تلنگانہ ریاست کو قبول نہیں کیا ہے۔ حج کمیٹی آف انڈیا کی ویب سائیٹ پر تلنگانہ ریاست کو علحدہ شناخت نہیں دی گئی اور صرف آندھرا پردیش کا شمار کیا گیا ہے۔ ریاست کی تقسیم کے بعد تلنگانہ اور آندھرا پردیش کیلئے علحدہ علحدہ حج کوٹہ الاٹ کیا گیا اور دونوں ریاستوں کی علحدہ علحدہ قرعہ اندازی بھی مکمل ہوچکی ہے لیکن سنٹرل حج کمیٹی نے اپنی ویب سائیٹ پر دونوں ریاستوں کے عازمین حج کی رہنمائی کیلئے تازہ معلومات کو جگہ نہیں دی ہے۔ سنٹرل حج کمیٹی کی ویب سائیٹ کی ابتر صورتحال کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ صدرنشین اور چیف ایکزیکیٹو آفیسر کے زمرہ میں صرف آندھرا پردیش کا ذکر کیا گیا جبکہ تلنگانہ کے چیف ایکزیکیٹو آفیسر اور ان کے ٹیلی فون نمبرات شامل نہیں کئے گئے۔ حیرت تو اس بات پر ہے کہ سنٹرل حج کمیٹی کے نزدیک ابھی بھی خلیل الدین احمد آندھرا پردیش حج کمیٹی کے صدرنشین ہیں جبکہ متحدہ ریاست میں بھی اس کمیٹی کی میعاد مکمل ہوگئی اور ابھی تک کوئی نئی کمیٹی تشکیل نہیں دی گئی ہے۔ صدرنشین کے نام کے آگے خلیل الدین احمد کے نام کے ساتھ ان کے فون نمبرات بھی شامل ہیں جس کے سبب عازمین حج مختلف معلومات کے سلسلہ میں ان سے ہی ربط پیدا کررہے ہیں۔ سنٹرل حج کمیٹی کو چاہیئے تھا کہ وہ تلنگانہ حج کمیٹی کو ریاستوں کی فہرست میں شامل کرتے ہوئے اس کے دفتر اور ایکزیکیٹو آفیسر کی تفصیلات کو شامل کرتی۔ حج کمیٹی اگرچہ دونوں ریاستوں میں منقسم ہوچکی ہے لیکن تلنگانہ حج کمیٹی کو ابھی تک سنٹرل حج کمیٹی نے تسلیم نہیں کیا۔ ویب سائیٹ پر دونوں ریاستوں کے منتخب عازمین کی تفصیلات موجود ہیں لیکن اس سلسلہ میں بھی تلنگانہ سے ناانصافی کی گئی۔ ریاستوں کی فہرست حروف تہجی کے اعتبار سے موجود ہے لیکن تلنگانہ کا نام سب سے آخر میں رکھا گیا ہے جبکہ ٹاملناڈو کے بعد تلنگانہ آنا چاہیئے۔ بتایا جاتا ہے کہ تلنگانہ اسٹیٹ حج کمیٹی نے ویب سائیٹ کی معلومات میں اصلاح کے سلسلہ میں کئی بار توجہ دلائی لیکن سنٹرل حج کمیٹی کو ویب سائٹ کو اَپ ڈیٹ کرنے میں کوئی دلچسپی نہیں۔ دیگر ریاستوں کے صدور نشین اور ایکزیکیٹو آفیسرس کے نام بھی وہی ہیں جو کئی برس قبل تھے جبکہ آج ان کی جگہ نئے صدورنشین اور ایکزیکیٹو آفیسرس کام کررہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT