Wednesday , September 26 2018
Home / ہندوستان / سوئس بینک معلومات کے ازخود تبادلہ کیلئے ہندوستان کو انتظار کرنا پڑے گا

سوئس بینک معلومات کے ازخود تبادلہ کیلئے ہندوستان کو انتظار کرنا پڑے گا

نئی دہلی۔ 12؍اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام)۔ ہندوستان کو سوئس بینک کی معلومات کا از خود تبادلہ عمل میں آنے کے لئے کچھ دن انتظار کرنا پڑے گا۔ سوئزرلینڈ کی جانب سے ٹیکس معاملوں پر اطلاعات فراہم کرنے یا ازخود ان کے تبادلہ کے لئے منصوبہ بنایا جارہا ہے۔ ہندوستان اور سوئزرلینڈ کے عہدیداروں کی جانب سے ٹیکس چوری کیسوں کو حل کرنے کے لئے باہمی انتظا

نئی دہلی۔ 12؍اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام)۔ ہندوستان کو سوئس بینک کی معلومات کا از خود تبادلہ عمل میں آنے کے لئے کچھ دن انتظار کرنا پڑے گا۔ سوئزرلینڈ کی جانب سے ٹیکس معاملوں پر اطلاعات فراہم کرنے یا ازخود ان کے تبادلہ کے لئے منصوبہ بنایا جارہا ہے۔ ہندوستان اور سوئزرلینڈ کے عہدیداروں کی جانب سے ٹیکس چوری کیسوں کو حل کرنے کے لئے باہمی انتظامات کرنے پر غور و خوض کیا جارہا ہے۔ سوئزرلینڈ نے ٹیکس معلومات کے از خود تبادلوں کے لئے ایک میکانزم وضع کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ بیرونی ملکوں میں ٹیکس چوری کا پتہ چلانے ازخود میکانزم تیار کیا جائے گا، لیکن ابتدائی مرحلہ میں سوئزرلینڈ نے صرف یوروپی یونین اور امریکہ پر توجہ مرکوز کی ہے۔ سوئس فیڈرل ڈپارٹمنٹ کے فینانس ترجمان نے بتایا کہ ابتدائی توجہ یوروپی یونین اور اس کے رکن ممالک پر توجہ دی جارہی ہے۔ اس کے علاوہ امریکہ پر بھی توجہ دی جائے گی۔ ایک دوسرے کے مخصوص ملکوں کی معلومات کو ازخود تبادلہ کے انتظامات کئے جارہے ہیں۔ اس سوال پر کہ آیا

ہندوستان بھی ان مخصوص ملکوں میں شامل ہے جن کے ساتھ سوئزرلینڈ ابتدائی مرحلہ میں بات چیت شروع کرے گا؟ ترجمان نے مزید کہا کہ ابتداء میں ان ملکوں پر توجہ دی جائے گی جن کی معیشت پر کڑی نظر ہے اور جن کا سوئزرلینڈ کے ساتھ سیاسی معاہدہ ہے۔ انھوں نے ہندوستان کا نام نہیں لیا۔ عہدیدار نے مزید کہا کہ سوئس فیڈرل کونسل نے 8 اکٹوبر کو دیگر ممالک کے ساتھ ٹیکس معاملوں میں معلومات کا از خود تبادلہ عمل میں لانے کے لئے نئے عالمی معیارات متعارف کئے جائیں گے۔ ہندوستان کی نئی حکومت جس نے مئی میں حلف لیا ہے، کا کہنا ہے کہ اس کے شہریوں کی جانب سے سوئس بینکوں کے بشمول دیگر بینکوں میں رکھے گئے مبینہ کالے دھن کو واپس لانے کی مساعی کی جائے گی۔ اس خصوص میں ایک اجلاس آنے والے ہفتوں میں ہندوستان اور سوئس عہدیداروں کے درمیان منعقد ہوگا۔

TOPPOPULARRECENT