Tuesday , September 18 2018
Home / Top Stories / سوائن فلو سے جملہ 19اموات،مرکز سے مدد طلب

سوائن فلو سے جملہ 19اموات،مرکز سے مدد طلب

حیدرآباد۔/21جنوری، ( سیاست نیوز) ریاست تلنگانہ بشمول حیدرآباد میں ’ سوائن فلو ‘ سے متاثرہ افراد کے منجملہ 19افراد کی موت واقع ہوچکی ہے۔ 20تا30افراد زیر علاج ہیں تاہم حکومت نے سوائن فلو کو پھیلنے سے روکنے کے ساتھ ساتھ متاثرین کیلئے بہتر طبی امداد فراہم کرنے بڑے پیمانے پر اقدامات کرنے کا اظہار کیا ہے۔ آج شب سکریٹریٹ میں منعقدہ کابینہ ک

حیدرآباد۔/21جنوری، ( سیاست نیوز) ریاست تلنگانہ بشمول حیدرآباد میں ’ سوائن فلو ‘ سے متاثرہ افراد کے منجملہ 19افراد کی موت واقع ہوچکی ہے۔ 20تا30افراد زیر علاج ہیں تاہم حکومت نے سوائن فلو کو پھیلنے سے روکنے کے ساتھ ساتھ متاثرین کیلئے بہتر طبی امداد فراہم کرنے بڑے پیمانے پر اقدامات کرنے کا اظہار کیا ہے۔ آج شب سکریٹریٹ میں منعقدہ کابینہ کے اجلاس کے فوری بعد اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے چیف منسٹر تلنگانہ مسٹرکے چندر شیکھر راؤ نے اس بات کا انکشاف کیا۔ انہوں نے بتایا کہ ممتاز ماہرین امراض سوائن فلو، محکمہ صحت و طبابت کے عہدیداروں اور کابینی رفقاء کے ساتھ اس مسئلہ پر تفصیلی جائزہ لیا گیا۔ چیف منسٹر نے واضح طور پر کہا کہ ’ سوائن فلو‘ کوئی مرض نہیں ہے بلکہ یہ ایک وبائی وائرس ہے جو ایک سے دوسرے تک پھیلتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ تیزی کے ساتھ پھیلتے ہوئے سوائن فلو کا انسداد اور احتیاطی تدابیر اختیار کرنے کے اقدامات کئے جارہے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ سوائن فلو کے تدارک کیلئے سب سے پہلے اپنے علاقہ اور حدود میں صفائی کا خاص خیال بہت ضروری ہے۔ چیف منسٹر نے بتایا کہ شدید سردیوں کی وجہ سے بھی سوائن فلو وائرس ایک سے دوسرے تک پھیلتا ہے اور سوائن فلو کی نشاندہی یہ ہوگی کہ تیز کھانسی، زکام اور اعضاء شکنی( جسمانی درد ) سے انسان متاثر ہوتا ہے

اور ایسے افراد کو فوری طور پر اپنے قریبی مقام پر واقع ہاسپٹل سے رجوع ہونے کا مشورہ دیا۔ ایسے متاثرہ افراد کو انفرادی طور پر صفائی کا خاص خیال رکھنا ہوگا۔ چیف منسٹر مسٹرکے چندر شیکھر راؤ نے کہا کہ عوام کو ’سوائن فلو ‘ سے خوف زدہ ہونے کی ضرورت نہیں اور نہ ہی کسی تشویش میں مبتلاء ہوں بلکہ از خود احتیاطی تدابیر اختیار کرکے سوائن فلو سے نجات حاصل کرسکتے ہیں۔ حکومت نے سوائن فلو سے متاثرہ افراد کا موثر علاج کرنے کیلئے سرکاری دواخانوں میں وافر مقدار میں ادویات فراہم کی ہیں۔ چیف منسٹر نے کہا کہ شہر کے نامور دواخانوں کے علاوہ تلنگانہ کے اضلاع میں واقع پرائمری ہیلت سنٹرس اور ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹرس ہاسپٹلس میں سوائن فلو کے متاثرین کیلئے مفت ادویات فراہم کی جائیں گی۔ یہاں تک کہ سوائن فلو سے متاثرہ افراد کو آروگیہ شری اسکیم کے تحت بھی علاج کروانے کی سہولت فراہم کی گئی ہے۔ مسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے کہا کہ سوائن فلو کے تیزی سے بڑھنے سے متعلق اخبارات کے ذریعہ موصولہ اطلاعات پر انہوں نے آج فوری طور پر وزیر اعظم مسٹر نریندر مودی اور مرکزی وزیر صحت سے ربط پیدا کیا اور تلنگانہ میں سوائن فلو سے پیدا شدہ حالات سے واقف کروایا اور فوری طور پر ضروری امداد و راحت بہم پہنچانے کی خواہش کی۔ جس پر وزیر اعظم نے غیر معمولی ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے اس بات کا تیقن دیا کہ فوری طور پر ممتاز ماہرین پر مشتمل ٹیم حیدرآباد روانہ کی جائے گی اور کہا کہ اس سے گھبرانے کی ضرورت نہیں ہے۔ کیونکہ سوائن فلو سے دہلی، راجستھان، تاملناڈو، گجرات، مہاراشٹرا ریاستیں بھی متاثر ہیں اور کوئی تشویش کی بات نہیں ہے۔ فی الفور احتیاطی اقدامات کے ذریعہ سوائن فلو کے پھیلنے والے وائرس پر قابو پایاجاسکتا ہے۔

مسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے ریاست بھر میں تمام بلدیات، گرام پنچایتوں کو صفائی کے خصوصی انتظامات کرنے کی سخت ہدایات دی گئی ہیں۔ سوائن فلو کی ادویات خانگی و کارپوریٹ دواخانوں میں دستیاب رہیں گی کیونکہ اس وائرس پر قابو پانے والی ادویات صرف سرکاری دواخانوں میں دستیاب رہتی ہیں۔ لیکن کارپوریٹ دواخانوں سے سوائن فلو سے متاثرہ افراد رجوع ہونے پر انہیں طبی امداد فراہم کرنے کیلئے اقدامات کئے گئے ہیں۔ چیف منسٹر نے مزید بتایا کہ سوائن فلو سے زیادہ تر پانچ سال تک کی عمر کے بچے، 65سال سے زائد افراد کے علاوہ حاملہ خواتین متاثر ہونے کے امکانات پائے جاتے ہیں۔ سوائن فلو سے متاثرہ افراد کو علاج کیلئے ضلع و منڈل سے حیدرآباد منتقل کرنا ہو تو انہیں108 سرویس کے ذریعہ مفت حیدرآباد کے دواخانہ کو منتقل کرنے کیلئے اقدامات کرنے کی تمام ضلع کلکٹروں و ڈسٹرکٹ میڈیکل اینڈ ہیلت آفیسرس کو ضروری ہدایات دی گئی ہیں۔ اس موقع پر ڈپٹی چیف منسٹرس محمد محمود علی، ڈاکٹر راجیا، پدما راؤ، این نرسمہاریڈی، بی سرینواس ریڈی، چیف سکریٹری راجیو شرما اور دیگر موجود تھے۔

TOPPOPULARRECENT