Monday , December 18 2017
Home / اضلاع کی خبریں / سوریا پیٹ میں یونیورسٹی کا قیام اور کارپوریشن کا درجہ دلانے کا وعدہ

سوریا پیٹ میں یونیورسٹی کا قیام اور کارپوریشن کا درجہ دلانے کا وعدہ

کلکٹریٹ اور ایس پی آفس کے سنگ بنیاد کے بعد چیف منسٹر کے چندرشیکھر راؤ کا خطاب

سوریا پیٹ 12 اکٹوبر (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) وزیر اعلیٰ کے چندرشیکھر راؤ نے آج سوریا پیٹ کا مصروف ترین دورہ کیا۔ انھوں نے اپنے دورہ کے موقع پر یہاں کروڑہا روپئے مالیت کے ترقیاتی و تعمیری کاموں کا افتتاح کیا۔ انھوں نے یہاں پر 80 کروڑ روپیوں کی لاگ سے تعمیر ہونے والے دفتر کلکٹریٹ کا 40 لاکھ روپیوں کی لاگت سے تعمیر ہونے والے ایس پی آفس کا سنگ بنیاد رکھا۔ اس طرح چیف منسٹر کے سی آر نے موضع چندو پٹلہ میں بھاری لاگت سے تعمیر کردہ 400 کے وی برقی سب اسٹیشن کا افتتاح کیا۔ ساتھ ہی ساتھ انھوں نے منڈل چیوملہ میں آنگن واڑی اسکول گرلز کالج جدید عمارتوں کا سنگ بنیاد رکھا۔ وزیر اعلیٰ کے سی آر نے اپنے دورہ کے موقع پر ڈبل بیڈ روم اسکیم کے تحت گولہ بازار میں تعمیر کردہ مکانات کا بھی افتتاح کیا۔ انھوں نے یہاں پر موضع امام پیٹ میں 30-6 کروڑ روپیوں کی لاگت سے تعمیر ہونے والے مشن بھگیرتا اور واٹر اسکیم کے پائپ لائن کی تنصیب کے کاموں کا بھی مشاہدہ کیا۔ وہ اپنے دورہ کے موقع پر مستقر کے پی ایس آر سنٹر میں جے سی گونپنا کے مجسمہ کی بھی نقاب کشائی انجام دی۔ بعدازاں چیف منسٹر کے چندرشیکھر راؤ نے سوریا پیٹ جونیر کالج گراؤنڈ پر منعقدہ ایک جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے بہ یک وقت یہاں پر کروڑہا روپیوں کی مالیت کے ترقیاتی و تعمیراتی کاموں کے آغاز پر عوام کو مبارکباد دی اور آنے والے دنوں میں مزید سوریا پیٹ کی تیز تر ترقی کو یقینی بنانے کے لئے اور جدید ضلع کو ایک ماڈل سٹی کا درجہ دلانے کے لئے اقدامات کرنے کا وعدہ کیا اور سوریا پیٹ کی ترقی کے لئے ایک سو کروڑ روپئے خصوصی فنڈس کی اجرائی کی پیشکش کی۔ چیف منسٹر کے چندرشیکھر راؤ نے اپنے خطاب میں تلنگانہ حکومت کی طرز حکمرانی کے حوالہ سے بتایا کہ ٹی آر ایس حکومت واحد حکومت ہے جو عملی اقدامات پر ایقان رکھتی ہے۔ اور اپوزیشن جماعتوں کے برسر اقتدار آنے کی پیش قیاسی کرنے پر انھیں دن کے خواب سے تعبیر کیا۔ وزیر اعلیٰ کے سی آر نے وزیر برقی و رکن اسمبلی سوریا پیٹ مسٹر جگدیش ریڈی کی قیادت میں چلنے والی ضلع کی ترقی پر مسرت و خوشی کا اظہار کرتے ہوئے انھیں مبارکباد دی اور سوریا پیٹ کی ترقی کے لئے وعدوں کی بارش کرتے ہوئے ڈبل بیڈ روم اسکیم کے تحت مزید ایک ہزار مکانات منظور کرنے اور یہاں پر ایک یونیورسٹی کے قیام کے ساتھ سوریا پیٹ کو کارپوریشن کا درجہ دلانے کا وعدہ کیا اور متحدہ ضلع نلگنڈہ کے تمام زیرالتواء آبرسانی پراجکٹوں کو اندرون ایک سال تکمیل کرنے کا بھی اعلان کیا۔ وزیر اعلیٰ کے سی آر نے اپنے مقررہ وقت دو بجے دیڑھ گھنٹے تاخیر سے ہیلی کیاپٹر کڑکڑہ میں قائم کردہ ہیلی پیاڈ پر اترے۔ وہاں پر وزیر جگدیش ریڈی، وزیر عمارات و شوارع ناگیشور راؤ، وزیر زراعت پوچارم سرینواس ریڈی، ضلع کلکٹر مسٹر سوریندر موہن، ایم پی سکھندر ریڈی، رکن پارلیمان بھونگیر نرسیا گوڑ، ارکان اسمبلی مسٹر کشور، ویراشم، بلدیہ چیرپرسن گنڈو وائی پاوالیکا، زرعی مارکٹ چیرمین وائی وی گرندھالیم چیرمین این سرینواس گوڑ نے کے سی آر کا والہانہ استقبال کیا۔ چیف منسٹر کی آمد کے پیش نظر سی پی جادھو کی قیادت میں پولیس کا معقول بندوبست کیا گیا۔ کے سی آر کی ایک جھلک دیکھنے کے لئے عوام بالخصوص خواتین سڑکوں پر قطار لگائے کھڑے تھے۔

TOPPOPULARRECENT