Monday , December 18 2017
Home / ہندوستان / سومناتھ بھارتی کی درخواست ضمانت مسترد

سومناتھ بھارتی کی درخواست ضمانت مسترد

مصالحت کا کوئی امکان نہیں، اہلیہ لپیکا کا موقف
نئی دہلی ۔ 14 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) دہلی کی عدالت نے عام آدمی پارٹی رکن اسمبلی سومناتھ بھارتی کو گھریلو تشدد اور اقدام قتل مقدمہ میں ضمانت قبل از گرفتاری منظور کرنے سے انکار کیا ہے۔ ایڈیشنل سیشن جج سنجے گارگ نے سومناتھ بھارتی کی ضمانت کیلئے دائر کردہ درخواست مسترد کردی جس میں انہوں نے کہا تھا کہ وہ دہلی کے سابق وزیر قانون ہیں اور ان کے فرار ہونے کا کوئی امکان نہیں ہے۔ ایڈوکیٹ وجئے اگروال نے بھارتی کی طرف سے پیش ہوتے ہوئے کہا کہ ان کے موکل اب بھی اپنی اہلیہ اور بچوں کی مدد کرنا چاہتے ہیں اور وہ مصالحت کیلئے بھی تیار ہیں۔ اگروال نے کہاکہ بھارتی خود ایک وکیل ہیں اور دہلی کے سابق وزیر قانون رہ چکے ہیں۔ اس لئے ان کے فرار ہونے کا کوئی موقع نہیں ہے۔ استغاثہ نے بھارتی کی درخواست کی مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ ان کے خلاف عائد الزامات انتہائی سنگین نوعیت کے ہیں۔ سومناتھ بھارتی کی اہلیہ لپیکا نے شوہر کے خلاف یہ مقدمہ درج کرایا ہے اور وہ عدالت میں موجود تھیں۔ انہوں نے ضمانت قبل از گرفتاری کی مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ میرے چھوٹے بچے بہت زیادہ متاثر ہورہے ہیں۔ وہ اپنے شوہر سے محبت کرتی ہیں اسی لئے پانچ سال تک ظلم برداشت کرتی رہی ہیں۔ عدالت نے جب ان سے پوچھا کہ کیا وہ مصالحتی کوشش کیلئے آمادہ ہیں انہوں نے انکار کیا اور کہا کہ مصالحت کا کوئی امکان نہیں۔ میرے شوہر مجھے اپنے بچوں کے سامنے مرنے کیلئے چھوڑ گئے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT