Thursday , September 20 2018
Home / شہر کی خبریں / سونیاگاندھی کی ملک کے لیے خدمات ناقابل فراموش : کے جانا ریڈی

سونیاگاندھی کی ملک کے لیے خدمات ناقابل فراموش : کے جانا ریڈی

راہول گاندھی کو کانگریس صدارت پر مبارکباد ، قائد اپوزیشن تلنگانہ اسمبلی کا ملا جلا ردعمل
حیدرآباد ۔ 15 ۔ دسمبر : ( سیاست نیوز ) : قائد اپوزیشن کے جانا ریڈی نے سونیا گاندھی کی عملی سیاست سے دستبرداری اور راہول گاندھی کی جانب سے پارٹی صدارت قبول کرنے پر خوشی و غم کا ملا جلا ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ سونیا گاندھی کی وجہ سے علحدہ تلنگانہ ریاست کا 60 سالہ دیرینہ خواب پورا ہوا ہے ۔ آج اسمبلی کے میڈیا کانفرنس ہال میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کے جانا ریڈی نے کہا کہ کانگریس کی 19 سال تک صدارت قبول کرنے والی سونیا گاندھی نے ملک کو متحد رکھنے سیکولرازم کو مستحکم کرنے اور جمہوریت کی بقاء کے لیے جو خدمات انجام دی ہے وہ ناقابل فراموش ہے ۔ ملک کی سالمیت کے لیے زندگیاں قربان کرنے والے گاندھی خاندان کی بہو سونیا گاندھی نے تین مرتبہ وزیراعظم کے عہدے کی قربانی دیتے ہوئے عوامی خدمات کو ترجیح دی ہے ۔ علحدہ تلنگانہ ریاست کے لیے گذشتہ 6 دہوں سے تحریک جاری تھی ۔ تاہم وعدے کے مطابق سونیا گاندھی نے علحدہ تلنگانہ ریاست تشکیل دینے کا تاریخی فیصلہ کیا ہے ۔ ٹی آر ایس کی جانب سے سونیا گاندھی کی خدمات کو فراموش کرتے ہوئے کے سی آر کی وجہ سے علحدہ تلنگانہ ریاست تشکیل پانے اور تحریک کے ذریعہ مرکزی حکومت کو جھکا دینے کے جو دعوے کئے ہیں وہ سب جھوٹے بے بنیاد ہے کیوں کہ کانگریس اسی جماعت کا نام ہے جس نے دلیرانہ مظاہرہ کرتے ہوئے انگریزوں کو ملک سے بیدخل کیا ، بڑے بڑے احتجاج اور قربانیاں دی ہیں ۔ کانگریس کے قائدین برسوں جیلوں میں بھی بند رہے ہیں ۔ کانگریس کے سامنے کے سی آر کی کوئی اہمیت نہیں ہے ۔ بحیثیت کانگریس صدر و صدر نشین یو پی اے سونیا گاندھی نے علحدہ تلنگانہ ریاست کی تشکیل کے لیے ملک کے تمام سیاسی جماعتوں میں اتفاق پیدا کیا ۔ پڑوسی ریاست آندھرا پردیش میں کانگریس کو نقصان پہونچنے کی پرواہ نہیں کی ۔ طلبہ و نوجوانوں سے مکمل ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے علحدہ تلنگانہ ریاست تشکیل دیا ہے ۔ 16 دسمبر سے قدیم کانگریس پارٹی کی باگ ڈور نئے نسل کے قائد راہول گاندھی کے ہاتھ میں دی جارہی ہے اور ہم تمام کانگریسیوں کو راہول گاندھی پر مکمل بھروسہ ہے ۔ پارٹی کے جو اصول و قواعد ہے اس پر سختی سے عمل کرتے ہوئے سارے ملک میں دوبارہ کانگریس پارٹی کا پرچم لہرائیں گے ۔ اس پہل میں کانگریس کے تمام قائدین راہول گاندھی کا ساتھ دیتے ہوئے ان سے مکمل تعاون کریں گے ۔ راہول گاندھی نے گجرات میں انتخابی مہم چلاتے ہوئے وزیراعظم نریندر مودی کو گجرات میں محدود ہونے کے لیے مجبور کردیا ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT