Tuesday , November 21 2017
Home / سیاسیات / سونیا گاندھی اور راہول ضمانت حاصل کریں گے

سونیا گاندھی اور راہول ضمانت حاصل کریں گے

نیشنل ہیرالڈ کیس میں آج مجسٹریٹ کے سامنے حاضری
نئی دہلی /18 دسمبر (سیاست ڈاٹ کام) سونیا گاندھی اور راہول گاندھی نیشنل ہیرالڈ کیس کے سلسلے میں کل مجسٹریٹ کے سامنے حاضر ہوں گے اور ضمانت کے لئے درخواست دے سکتے ہیں۔ کانگریس نے آج زور دے کر کہا کہ وہ اس کیس کے تمام قانونی پہلوؤں اور اختیارات کا جائزہ لے رہی ہے۔ کانگریس کے چیف ترجمان رندیپ سورج والا نے کہا کہ ہم سونیا گاندھی اور راہول گاندھی کے لئے ضمانت حاصل کرنے کے بشمول تمام قانونی اور دیگر پہلوؤں کا جائزہ لیں گے۔ سونیا گاندھی اور ان کے فرزند کل پٹیالہ ہاؤس کورٹ میں میٹرو پولیٹن مجسٹریٹ کے سامنے حاضر ہوں گے۔ صدر کانگریس اور نائب صدر کو بی جے پی لیڈر سبرامنیم سوامی کی پیش کردہ ایک خانگی فوجداری شکایت کے بعد سمن جاری کیا گیا تھا۔ سبرامنیم سوامی نے الزام عائد کیا تھا کہ نیشنل ہیرالڈ کی جائداد میں دھاندلیاں کی گئی ہیں اور اعتماد شکنی کے علاوہ سازش اور دھوکہ دہی کی گئی ہے۔ سورج والا نے کہا کہ کانگریس قیادت عدالت کی کارروائی میں کسی بھی طرح سے اثرانداز نہیں ہوگی۔
سونیا اور راہول کی عدالت میں حاضری پر سخت حفاظتی انتظامات
نئی دہلی /18 دسمبر (سیاست ڈاٹ کام) صیانتی انتظامات میں آج شدت پیدا کردی گئی، جب کہ پٹیالہ ہاؤس ڈسٹرکٹ کورٹ کے احاطہ میں صدر کانگریس سونیا گاندھی، ان کے فرزند راہول گاندھی اور دیگر افراد کی عدالت کے اجلاس پر نیشنل ہیرالڈ مقدمہ کے سلسلے میں حاضری مقرر ہے۔ عدالت کے بموجب سینئر عہدہ داروں نے جن کا تعلق خصوصی حفاظتی گروپ (ایس پی جی)، دہلی پولیس اور انٹلی جنس بیورو نے عدالت میں حفاظتی انتظامات کا جائزہ لیا اور مزید 16 سی سی ٹی وی کیمرے نصب کئے۔ صیانتی عملہ نے انتظامات پر تفصیل سے تبادلہ خیال کیا، کیونکہ سونیا اور راہول گاندھی دونوں ایس پی جی کے حفاظتی انتظامات کے زمرے میں شامل ہیں۔ صیانتی عہدہ داروں کا ایک اجلاس پٹیالہ ہاؤس ڈسٹرکٹ کورٹ کے جج کے ساتھ بھی منعقد کیا گیا۔ پولیس نے وسیع حفاظتی انتظامات کئے ہیں، کیونکہ عدالت ایک عوامی مقام ہے، جہاں کئی وکلاء اور مقدمہ کے فریق روزانہ آتے ہیں۔ عدالت کے احاطہ میں قائم دوکانیں کل بند رہیں گی اور گیٹ نمبر 2 کے متصلہ علاقے کو تین مرحلوں پر مشتمل حفاظتی انتظامات کے تحت رکھا جائے گا۔ اسی علاقہ میں مقدمہ کی سماعت مقرر ہے۔

TOPPOPULARRECENT