Monday , December 18 2017
Home / Top Stories / سونے کی قیمت میں مسلسل پانچویں دن کمی

سونے کی قیمت میں مسلسل پانچویں دن کمی

۔75 روپئے فی تولہ گراوٹ ، چاندی کی قیمت میں اضافہ
ممبئی۔ 4 اکتوبر (سیاست ڈاٹ کام) سونے کی قیمت میں مسلسل پانچویں دن بھی گراوٹ کا رجحان برقرار رہا اور آج صرافہ بازار میں اس کی قیمت فی 10 گرام 75 روپئے کم ہوئی ہے۔ ذخیرہ اندوزوں اور دکان داروں نے اس قیمتی دھات کی خریدی میں دلچسپی نہیں دکھائی۔ اس کے برعکس چاندی کی قیمت میں 80 روپئے فی کیلو کا اضافہ دیکھا گیا۔ معیاری سونا (99.5%) کی قیمت 75 روپئے کمی کے بعد 29,425 روپئے فی 10 گرام رہی جبکہ کل اس کی قیمت29,500 روپئے تھی۔ خالص سونا (99.9%) کی قیمت میں بھی اسی طرح گراوٹ آئی اور یہ کل کی قیمت 29,650 روپئے کے مقابلے آج 29,575 روپئے فی 10 گرام رہی۔ چاندی کی قیمت میں 80 روپئے اضافہ ہوا اور اس کی قیمت کل 38,990 روپئے کے مقابلے آج 39,070 روپئے فی کیلو رہی۔ عالمی سطح پر سونے کی قیمت گزشتہ سیزن میں اب تک سب سے کم رہی تھی ، لیکن اب اضافہ کا رجحان دیکھا جارہا ہے۔ ڈالر کی قدر میں گراوٹ کے سبب عالمی سطح پر سونے کی قیمت میں اضافہ ہورہا ہے۔ آج یہ 1,281.30ڈالر فی اونس رہی۔ چاندی کی قیمت میں بھی اضافہ ہوا اور یہ 16.80 ڈالر فی اونس رہی۔

ریاستیں پٹرول اور ڈیزل پر ویاٹ میں کمی لائیں
نئی دہلی۔ 4 اکتوبر (سیاست ڈاٹ کام) مرکزی حکومت نے اکسائز ڈیوٹی 2 روپئے فی لیٹر کم کرنے کے بعد ریاستوں سے خواہش کی ہے کہ وہ پٹرول اور ڈیزل پر سیلز ٹیکس یا ویاٹ میں 5% تک کمی کرتے ہوئے صارفین کو مزید راحت فراہم کریں۔ وزیر فینانس ارون جیٹلی عنقریب تمام ریاستی چیف منسٹرس کو مکتوب روانہ کریں گے جس میں ان سے کہا جائے گا کہ پٹرول اور ڈیزل پر ویاٹ میں کٹوتی کی جائے۔ وزیر تیل دھرمیندر پردھان نے آج ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے یہ بات کہی۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے پہل کرتے ہوئے اکسائز ڈیوٹی میں کمی کی ہے، اب ریاستوں کی باری ہے کہ وہ ویاٹ میں کمی لائیں۔ مرکز کے برعکس ریاستوں نے ویاٹ کو ایک ایسے ٹیکس کے طور پر نافذ کیا ہے کہ جب بھی قیمت میں اضافہ ہوتا ہے تو یہ ویاٹ میں بھی اضافہ ہوجاتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مرکز نے اکسائز ڈیوٹی میں کٹوتی کے ذریعہ 26,000 کروڑ روپئے ریوینیو کی قربانی دی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ریاستیں سب سے بڑی استفادہ کنندگان ہیں۔ وہ ویاٹ سے ہونے والی ساری آمدنی کے علاوہ سنٹرل اکسائز وصولی کا 42% بھی حاصل کرتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ مرکز مابقی رقم ریاستوں میں مرکزی اسپانسر کردہ اسکیمات کو مالیہ فراہم کرنے میں خرچ کرتا ہے۔

TOPPOPULARRECENT