Thursday , November 23 2017
Home / Top Stories / سڑکوں کی تعمیر کیلئے ’’حیدرآبادروڈ ٹاسک فورس ‘‘کا اعلان

سڑکوں کی تعمیر کیلئے ’’حیدرآبادروڈ ٹاسک فورس ‘‘کا اعلان

وزیر بلدی نظم و نسق کے ٹی راما راؤ کا جائزہ اجلاس، نئے پراجکٹس پرغور
حیدرآباد۔/18اکٹوبر، ( سیاست نیوز) ریاستی بلدی نظم و نسق کے ٹی آر نے شہرحیدرآباد میں نئی سڑکوں کی تعمیر و موجودہ سڑکوں کی مرمت کیلئے ’’ حیدرآباد روڈ ٹاسک فورس ‘‘ قائم کرنے کا اعلان کیا۔ اس ٹاسک فورس میں سکریٹری بلدی نظم و نسق جی ایچ ایم سی اور ایچ ایم ڈی اے کے کمشنرس ، حیدرآباد میٹرو واٹرورکس، میٹرو ریل اور ٹی آیس آئی آئی سی کے منیجنگ ڈائرکٹرس ، چیف سٹی پلانر ( سی سی پی ) جی ایچ یو سی ایم ڈی، ایچ ایم ڈی اے، حیدرآباد روڈ ڈیولپمنٹ کارپوریشن، سی ای او بحیثیت ارکان شامل رہیں گے۔ ریاستی وزیر بلدی نظم و نسق کے ٹی آر نے آج حیدرآباد میٹرو واٹر ورکس میں ٹاسک فورس کے ارکان سے ملاقات کرتے ہوئے گریٹر حیدرآباد کے سڑکوں کی صورتحال کا جائزہ لیا اور انہیں ہدایت دی کہ وہ سڑکوں پر نظر رکھیں۔ موجودہ سڑکوں کے ترقیاتی اقدامات، نئی سڑکوں کی تعمیر و مرمت کے علاوہ نئے پراجکٹس پر عمل آوری کیلئے ایک دوسرے سے مشاورت کرتے ہوئے خصوصی حکمت عملی تیار کریں۔ کے ٹی آر نے کہا کہ ایک طرف انجینئرنگ شعبہ میں تقررات کرتے ہوئے عملے کی کمی کو دور کیا جارہا ہے، دوسری طرف حکومت سے فنڈز کی اجرائی کو یقینی بناتے ہوئے بینکوں سے قرض حاصل کرنے پر بھی خصوصی توجہ دی جارہی ہے۔ حکومت نے سڑکوں پر 20ہزار کروڑ روپئے خرچ کرنے کا فیصلہ کیا ہے جس کے پیش نظر حیدرآباد روڈ ٹاسک فورس قائم کی گئی ہے۔ ریاستی وزیر بلدی نظم و نسق کے ٹی آر نے حالیہ بارش سے شہر کی سڑکوں کو پہنچنے والے نقصانات کا جائزہ لیتے ہوئے جنگی خطوط پر مرمتی کام کرنے کی عہدیداروں کو ہدایت دی۔ سڑکوں کی مرمت کیلئے 77 کروڑ رپئے جاری کئے گئے ہیں۔ ریاستی وزیر نے کہا کہ موسم براست میں پانی جمع ہونے اور ٹریفک جام ہونے والی 350 سڑکوں کی تعمیرات کیلئے تقریباً 130 کروڑ روپئے خرچ کئے جائیں گے۔ یہ تمام تعمیری کام آئندہ برسات تک مکمل کئے جائیں گے۔اس کے علاوہ سڑکوں کی ترقی سے متعلق دوسرے پراجکٹس کا بھی جائزہ لیا گیا۔ کے ٹی آر نے کہا کہ حیدرآباد روڈ ڈیولپمنٹ کارپوریشن کی جانب سے کئے جانے والے کاموں کے ڈی پی او تیار ہوچکے ہیں فوری ٹنڈرس طلب کرنے کے احکامات جاری کئے۔ انہوں نے ایس آر ڈی پی کے ذریعہ آئندہ سال تک 1000 کروڑ روپئے کا کام مکمل ہونے کی توقع کا اظہار کیا۔ جن علاقوں میں ٹریفک مسائل پیدا ہورہے ہیں وہ بھی دور ہوجانے کی امید کا اظہار کیا۔ کے ٹی آر نے کہا کہ ابھی تک صرف 50 انجینئرس سڑکوں کی نگرانی کیا کرتے تھے لیکن اب ہر ڈیویژن کیلئے یکم نومبر سے 150 ڈیویژنس کیلئے 150 انجینئرس کی خدمات سے استفادہ کیا جائے گا۔

TOPPOPULARRECENT