Sunday , December 17 2017
Home / سیاسیات / سہارنپور میں قتل کی سازش ، مایاوتی کا الزام

سہارنپور میں قتل کی سازش ، مایاوتی کا الزام

بی جے پی کی جانب سے الزام مسترد، بی جے پی دستوری اداروں کو کمزور کررہی ہیں: بی جے پی
اعظم گڑھ ؍ لکھنؤ (یو پی) ۔ 24 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) بی جے پی پر تنقید کرتے ہوئے صدر بی ایس پی مایاوتی نے آج الزام عائد کیا کہ ان کے دورہ سہارنپور کے موقع پر انہیں قتل کرنے کی سازش کی گئی تھی۔ قبل ازیں جاریہ سال ذات پات کی بنیاد پر جھڑپیں ہوئی تھیں جبکہ بی جے پی نے ان کے الزامات کو مسترد کردیا۔ اعظم گڑھ میں ایک جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے مایاوتی نے الزام عائد کیا کہ اطلاعات کے بموجب جو انہیں حاصل ہوئی ہیں، ذات پات کی بنیاد پر سہارنپور میں جھڑپیں ان کو قتل کرنے کی سازش کا ایک حصہ تھیں۔ منصوبہ یہ تھا کہ جب دلت افراد کو زیادہ تعداد میں ہراساں کیا جائے گا تو ان کے لیڈر ان کے آنسو پوچھنے کیلئے ضرور آئیں گے۔ بی جے پی کے کارکنوں کا خیال تھا کہ جب مایاوتی شبیرپور جائیں گی اور دلت سماج کی تائید میں بات چیت کریں گی تو جذبات بھڑکیں گے اور خون بہے گا جس کے دوران مایاوتی کو بھی قتل کردیا جائے گا۔ سابق چیف منسٹر یوپی نے کہا کہ کیونکہ انہیں پارلیمنٹ میں اس مسئلہ پر تقریر کرنے کی اجازت نہیں دی گئی اس لئے انہوں نے راجیہ سبھا کی رکنیت سے استعفیٰ دے دیا۔ بی جے پی کی صدر کے اس بیان پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے یو پی بی جے پی کے ترجمان راکیش ترپاٹھی نے لکھنؤ میں کہا کہ مایاوتی ایسے بیانات اس لئے دے رہی ہیں کیونکہ ان کے پاس موضوع گفتگو بنانے کیلئے کوئی مسئلہ نہیں ہے۔ وہ مایوس ہوگئی ہیں۔ بی ایس پی کے بیشتر بانی ارکان پہلے ہی پارٹی سے ترک تعلق کرچکے ہیں اور وہ یکا و تنہا محفوظ کررہی ہیں۔ ترپاٹھی نے یہ دعویٰ کیا کہ مایاوتی کی ذات پات کی سیاست بری طرح ناکام ہوچکی ہے۔ انہیں پریشانی ہیکہ بی جے پی حکومت ان کے مبینہ کرپشن کے معاملات کی تحقیقات شروع کردے گی۔ ترپاٹھی نے کہا کہ بی جے پی کے رکن اسمبلی برہمادت دویدی نے مایاوتی کی جان بچائی تھی لیکن وہ آج مختلف لب و لہجہ میں بات چیت کررہی ہیں۔ اعظم گڑھ میں اپنی تقریر کے دوران سرپرست سماج وادی پارٹی ملائم سنگھ یادو نے کہا کہ یہ بی جے پی ہی تھی جس نے مایاوتی کو اپنا اولین ہدف مقرر کیا تھا۔ اعظم گڑھ سے موصولہ اطلاع کے بموجب بی جے پی نے الزام عائد کیا کہ صدر بی ایس پی مایاوتی دستوری اداروں کو کمزور کررہی ہے جبکہ سابق چیف منسٹر یوپی نے بی جے پی پر الزام عائد کیا کہ وہ اقتدار کا استحصال کررہی ہے۔ سرکاری مشنری کا غلط استعمال کررہی ہے اور سی بی آئی ای ڈی اور محکمہ انکم ٹیکس کو استعمال کرتے ہوئے عوام کو ہراساں کررہی ہے۔

TOPPOPULARRECENT