Sunday , July 22 2018
Home / Top Stories / سیاست آرٹ اینڈ کیلی گرافی گیلری سے بھوپال ایم پی الوک سنجر بے حد متاثر

سیاست آرٹ اینڈ کیلی گرافی گیلری سے بھوپال ایم پی الوک سنجر بے حد متاثر

بھوپال میں نمائش ’ جذبہ ‘ کے دوران خطاطی کے نادر آرٹ ورکس کی نمائش توجہ کا مرکز
بھوپال ۔ 20 ۔ مارچ : ( پرویز باری ) : اقراء انٹرنیشنل ویمنس الائنس کے زیر اہتمام ہندی بھون ، بھوپال میں 16 تا 18 مارچ منعقدہ سہ روزہ قومی نمائش و شاپنگ کارنیوال ’ جذبہ ‘ میں روزنامہ سیاست کی جانب سے منعقدہ سیاست آرٹ اینڈ کیلی گرافی گیلری توجہ کا مرکز رہی ۔ بھوپال کے رکن پارلیمنٹ مسٹر الوک سنجر ، جنہوں نے آخری دن اس نمائش کا مشاہدہ کیا ۔ سیاست آرٹ اینڈ کیلی گرافی گیلری میں ڈسپلے کیے گئے نادر آرٹ ورک کے کلکشن کو دیکھ کر حیرت کا اظہار کیا اور اس سے کافی متاثر ہوئے ۔ انہوں نے کہا کہ ’ میں ہر چیز کو چھوڑ کر خطاطی سیکھوں گا اور پوری طرح اس میں مصروف ہوں گا ‘ ۔ سنجر نے خطاطی کے فن میں اس قدر دلچسپی دکھائی کہ انہوں نے اسپاٹ پر خطاطی کے آرٹ ورک پر اپنا ہاتھ پھرانے کی کوشش کی اور بعد میں قلم کی خواہش کی جو بمبو کی لکڑی سے تیار کیا جاتا ہے جسے آرٹسٹ محمد عامر نے انہیں فراہم کیا اور وہ اسے اپنے ساتھ لے گئے ۔ آرٹسٹ محمد عامر نے اردو خطاطی میں الوک سنجر کا نام لکھا جسے نبیل باری نے انہیں پیش کیا ۔ بعد ازاں مسٹر سنجر نے اس نمائش میں حصہ لینے والوں میں سرٹیفیکٹس تقسیم کئے ۔ انہوں نے آئی آئی ڈبلیو اے ، ممبئی یونٹ صدر مسز عظمیٰ ناہید کی خواتین کے امپاورمنٹ کے لیے کاوشوں کی ستائش کی جن کی نگرانی میں ’ جذبہ ‘ کا انعقاد عمل میں آیا ۔ انہوں نے مسز عظمیٰ ناہید کو بھوپال میں IIWA آوٹ لیٹ کے قیام میں ان کی جانب سے تمام تر مدد فراہم کرنے کا تیقن دیا ۔ ان کے علاوہ اس فن میں دلچسپی رکھنے والی خواتین کی ایک اچھی تعداد نے فن خطاطی سیکھنے کی خواہش کا اظہار کیا اور سیاست کے آرٹسٹس سے اس کے لیے درکار وقت اور دیگر اس کی دشواری اور پیچیدگی کے بارے میں دریافت کیا ۔ آرٹسٹس محمد عامر اور محمد مظہر الدین نے ان خواتین کو اس آرٹ کے لیے حیدرآباد میں دستیاب سہولتوں کے بارے میں بتایا جو سیاست کی جانب سے فراہم کی جارہی ہیں ۔ ’ جذبہ ‘ میں آرٹ اینڈ کیلی گرافی اسٹال کا مقصد بھوپال کے لوگوں میں ہند ۔ اسلامی کیلی گرافی روایت کے بارے میں سیکھنے کا جذبہ پیدا کرنا تھا جو ہندی کے غلبہ کے بعد اس سے دور ہوگئے ہیں ۔ اس نمائش میں سینکڑوں آرٹ ورکس کی نمائش کی گئی جن میں مشہور آرٹسٹس نعیم صابری ، فہیم صابری ، محمد حکیم ، محمد عامر کے آرٹس ورکس ، عبدالطیف فاروقی کی کینوس پینٹنگس ، محمد مظہر الدین کا ووڈن آرٹ شامل ہے ۔ جناب ظہیر الدین علی خاں منیجنگ ایڈیٹر سیاست کے مطابق سیاست گیلری طلبہ کو اس آرٹ کی ٹریننگ فراہم کرنے کے لیے تیار ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ حیدرآباد میں اسلامی خطاطی اور پینٹنگ کے تین ہزار شاہکار ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستان اسلامی آرٹ اور خطاطی کے ایک مرکز کے طور پر ابھر سکتا ہے ۔ سیاست انڈین آرٹ اینڈ کیلی گرافی گیلری نمائش نے ماضی میں قومی اور بین الاقوامی سطح پر اس کے سینکڑوں آرٹیفیاکٹس کی نمائش کی ۔ جس میں امریکہ ، سعودی عربیہ ، دوبئی جب کہ ہندوستان میں دہلی ، علی گڑھ ، حیدرآباد ، کریم نگر ، بنگلور ، بیدر وغیرہ میں اس کی نمائش کی گئی ۔ ’ جذبہ ‘ کی افتتاحی تقریب میں مسز قیصر زمان ، سکریٹری کروائی ایجوکیشن سوسائٹی اور منوج سریواستو ، پرنسپال سکریٹری ، کمرشیل ٹیکس ، کلچر حکومت مدھیہ پردیش نے بحیثیت مہمان خصوصی شرکت کی ۔ جب کہ مسز غزالہ فیصل ڈائرکٹر مرکزی وزارت مواصلات مسز نصرت مہدی ، سکریٹری ایم پی اردو اکیڈیمی اور ممتاز اردو ادیبہ مسز رضیہ حامد نے بحیثیت اعزازی مہمان شرکت کی ۔۔

TOPPOPULARRECENT