Monday , December 18 2017
Home / Top Stories / سیاسی جماعتوں میں داخلی جمہوریت ملک کی ترقی کیلئے ضروری

سیاسی جماعتوں میں داخلی جمہوریت ملک کی ترقی کیلئے ضروری

اقدار و نظریات پر بھی غور و فکر کی ضرورت ، بی جے پی کی دیوالی ملن تقریب سے مودی کا خطاب
نئی دہلی ۔ /28 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) وزیراعظم نریندر مودی نے سیاسی جماعتوں میں داخلی جمہوریت پر غور و بحث کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے ادعاء کیا کہ ملک کے مستقبل کیلئے ان (سیاسی جماعتوں) میں حقیقی جمہوری جذبہ کا فروغ ضروری ہے ۔ وزیراعظم مودی بی جے پی ہیڈکوارٹرس میں آج منعقدہ ’ دیوالی ملن ‘ تقریب میں اپنے مختصر خطاب کے دوران یہ ریمارکس کئے اور کہا کہ سیاسی جماعتوں کو فنڈنگ کے مسئلہ پر اکثر بحث کی جاتی ہے لیکن ان کے اقدار ، نظریات ، داخلی جمہوریت کے علاوہ نئی نسل کے قائدین کو دیئے جانے والے موقعوں کے بارے میں کوئی غور و بحث نہیں کی جاتی ۔ انہوں نے کہا کہ ’’ آیا جمہوری اقدار ان (سیاسی جماعتوں) کے بنیادی اقدار میں شامل ہیں یا نہیں اس پر وسیع تر بحث مباحثہ کیا جانا چاہئیے ۔ میرا ایقان ہے کہ سیاسی جماعتوں میں حقیقی جمہوری جذبہ فروغ دینا نہ صرف ملک کے مستقبل کیلئے بلکہ جمہوریت کے لئے بھی ضروری ہے ‘‘ ۔ وزیراعظم مودی نے اگرچہ کسی حریف جماعت کا حوالہ نہیں دیا تاہم ان کے یہ تبصرے ان اطلاعات کے پس منظر میں آئے کہ کانگریس اپنے نائب صدر راہول گاندھی کو ان کی والدہ سونیا گاندھی کی جگہ صدارت پر فائز کرسکتی ہے ۔ بی جے پی اکثر کانگریس پر خاندانی وراثت کو فروغ دینے کا الزام عائد کرتی رہی ہے ۔وزیراعظم نے کہا کہ جب جنتاپارٹی تھی تو اس کی شکل چھوٹی تھی اور کسی واقعہ پر مرکزی قیادت کی جو رائے ہوتی تھی پارٹی کے چھوٹے کارکن کا احساس بھی ٹھیک اسی طرح کا ہوتا تھا اگرچہ الفاظ کے استعمال میں فرق ہوتاتھا ۔ اس سے الگ ہونے کے بعد بنی بی جے پی آج بہت بڑی پارٹی بن گئی ہے اور مختلفمسائل پر الگ الگ خیالات سامنے آنے لگے ہیں ۔ مودی نے کہا کہ سیاسی جماعتوں میں کس قسم کے لوگوں کو کارکن بنایا جا رہا ہے اس پر بھی غور کیا جاناچاہیے ۔انہوں نے اپنے پرانے دنوں کی یاد تازہ کرتے ہوئے کہا کہ اس دوران وہ پارٹی ہیڈ کوارٹر میں رہتے تھے ۔ اس وقت میڈیاکی نوعیت ایسی نہیں تھی اس کا دائرہ کار بہت چھوٹا تھا۔ سات آٹھ گنے چنے صحافیوں سے بات چیت کر لیتے تھے اور خبر سب جگہ پہنچ جاتی تھی۔ آج میڈیا بہت وسیع ہے جو ایک چیلنج بھی ہے ۔ وزیر اعظم نے کہا کہ اب لوگوں کو ان سے نہیں مل پانے کی شکایت ہو سکتی ہے ۔ وہ ایک وقت تھا جب وہ میڈیا سے ملنا چاہتے تھے۔ انہوں نے میڈیا سے اپنے طویل تعلقات کا ذکر کرتے ہوئے مسکراتے ہوئے کہا کہ آج ہم بغیر کاغذ، قلم اور کیمرے کے مل رہے ہیں۔ مودی حکومت نے صفائی مہم میں تعاون کے لئے میڈیا کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ اخبارات میں بھلے ہی ان کی کتنی بھی تنقید کی گئی ہو لیکن حفظان صحت کے معاملے پر میڈیا نے قابل ستائش کام کیا ہے ۔ تمام فریقوں نے حفظان صحت پر بہتر کام کیا ہے جس کے لئے وہ شکریہ کے مستحق ہیں۔ مودی بعد میں منچ سے نیچے آئے اور میڈیا اہلکاروں سے مصافحہ کیا اور ان کی خیریت دریافت کی۔ اس موقع پر بی جے پی صدر امت شاہ، وزیر دفاع نرملا سیتا رمن، وزیر اطلاعات و نشریات اسمرتی ایرانی، اقلیتی امور کے وزیر مختار عباس نقوی، وزیر اعظم کے دفتر میں وزیر مملکت جتیندر سنگھ اور بی جے پی میں تنظیمی امور کے انچارج رام لال بھی موجود تھے ۔

TOPPOPULARRECENT