Saturday , November 18 2017
Home / شہر کی خبریں / سیاسی جماعتوں کو آر ٹی آئی دائرہ میں لایا جائے

سیاسی جماعتوں کو آر ٹی آئی دائرہ میں لایا جائے

لوک سبھا و اسمبلی کے بیک وقت انتخابات مشکل ‘ ٹی ایس کرشنا مورتی
حیدرآباد 8 ستمبر ( پی ٹی آئی ) سیاسی جماعتوں کو بھی قانون حق معلومات کے دائرہ میں لایا جانا چاہئے ۔ سابق چیف الیکشن کمشنر ٹی ایس کرشنا مورتی نے یہ بات بتائی ۔ انہوں نے کہا کہ لوک سبھا اور ریاستی اسمبلیوں کے انتخابات بیک وقت کروانے میں مشکلات درپیش ہیں۔ اس سوال پر کہ آیا سیاسی جماعتوں کو قانون حق معلومات کے دائرہ میں لایا جانا چاہئے کرشنا مورتی نے کہا کہ یقینا لایا جانا چاہئے ۔ انہوں نے کہا کہ صرف انتخابات سے متعلق ان کے اہم فیصلوں کے ماسوا ان کے تمام انتظامی فیصلوں ‘ ان کی فنڈنگ اور ہر چیز کو عوامی دائرہ میں لانے کی ضرورت ہے ۔ انہوں نے کہا کہ سیاسی جماعتیں حکومتیں تشکیل دینے کیلئے جو پالیسی فیصلے کرتی ہیں انہیں اس دائرہ میں لانے کی ضرورت نہیں ہے ۔ انہوں نے پی ٹی آئی سے بات کرتے ہوئے کہا کہ جس چیز کو آر ٹی آئی دائرہ میں لایا جانا چاہئے اس میں معاشی پہلو اور انتظامی پہلو بھی شامل ہیں۔ مثال کے طور پر چاہے سیاسی جماعتیں داخلی انتخابات منعقد کر رہی ہیں یا نہیںاس کو عوام کے سامنے رکھا جانا چاہئے ۔ ان کا اکاؤنٹ بھی عوام میں آنا چاہئے ۔ نیتی آیوگ کی جانب سے لوک سبھا اور اسمبلیوں کے انتخابات بیک وقت کروائے جانے کی حمایت پر انہوں نے کہا کہ نظریاتی طور پر یہ بات پرکشش ہے تاہم عملا اس میں مشکلات ہیں اور اس پر عمل آوری مشکل ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اس کیلئے سب سے پہلے دستور میں ترمیم کی ضرورت ہوگی ۔ اس کے علاوہ مرکزی نیم فوجی دستوں کی دستیابی میں بھی اضافہ کرنے کی ضرورت ہے ۔

TOPPOPULARRECENT