Saturday , November 17 2018
Home / ہندوستان / سیتارامن نے فوج۔پولیس تصادم مسئلہ کا جائزہ لیا

سیتارامن نے فوج۔پولیس تصادم مسئلہ کا جائزہ لیا

بومڈیلا۔7 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) مرکزی وزراء نرملا سیتارامن اور کرن رجیجو نے چہارشنبہ کو یہاں فوج اور اروناچل پردیش پولیس کے درمیان تصادم کے باعث پیدا ہونے والی صورتحال کا جائزہ لیا۔ بعض سپاہیوں نے گزشتہ ہفتہ مبینہ طور پر بومیڈیلا پولیس اسٹیشن میں ہنگامہ کیا تھا اور پولیس ملازمین اور شہریوں پر حملہ کیا تھا۔مرکزی مملکتی وزیر داخلہ رجیجو نے پی ٹی آئی کو بتایا کہ ’’وزیر دفاع (نرملا سیتارامن) اور میں نے فوج اور ریاستی پولیس ملازمین کے درمیان جاری ٹکرائو اور لڑائی جھگڑے کا جائزہ لیا ہے۔ میں نے ہر ایک سے اپیل کی کہ اسے فوج بمقابلہ پولیس اور سیول ایڈمنسٹریشن مسئلہ کے طور پر نہ دیکھا جائے۔‘‘ رجیجو نے جو اروناچل پردیش سے تعلق رکھتے ہیں، کہا کہ 2 نومبر کو بولڈیلا میں پیش آئے بدبختانہ واقعہ کی یکسوئی دوستانہ انداز میں افہام و تفہیم کے ذریعہ کی جانی چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ فوج اور پولیس دونوں قوم کی خدمت کررہے ہیں۔ ایک واقعہ کو ان عظیم اداروں کے امیج کو داغدار بنانے کی اجازت نہیں دی جاسکتی۔ سیتارامن اور رجیجو دونوں نے اعتماد پیدا کرنے کے اقدامات کے حصہ کے طور پر سیول سوسائٹی کے لوگوں سے بھی ملاقات کی۔ نرملا سیتارامن ہند۔چین سرحد پر فارورڈ علاقوں میں متعین کئے گئے سپاہیوں کے ہمراہ دیوالی منانے کے لیے اروناچل پردیش کا دورہ کررہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT