Sunday , September 23 2018
Home / شہر کی خبریں / سید وقار الدین عرب لیگ کے عالمی ایوارڈ کیلئے منتخب

سید وقار الدین عرب لیگ کے عالمی ایوارڈ کیلئے منتخب

جاریہ ماہ نئی دہلی میں پُر اثر تقریب کا اہتمام۔ ایوارڈ سے سرفراز کیا جائیگا

حیدرآباد۔/7مارچ، ( پریس نوٹ ) جناب سید وقار الدین صدر نشین انڈو عرب لیگ حیدرآباد و چیف ایڈیٹر روز نامہ ’’ رہنمائے دکن ‘‘ کو عرب لیگ کی جانب سے عالمی سطح کا باوقار ایوارڈ سال 2018 ء جاریہ ماہ کے اختتام میں دیا جائے گا۔ جناب سید وقار الدین گذشتہ 50 برسوں سے ہند۔ عرب تعلقات کو فروغ دینے اور عرب ممالک کے درپیش مسائل سے اظہار یگانگت اور ان کی یکسوئی میں تعاون اور فلسطینی کاز کی حمایت میں مصروف عمل ہیں۔ 22 ممالک کی نمائندہ تنظیم عرب لیگ کی جانب سے ہر سال یہ باوقار ایوارڈ عالمی سطح پر کسی ایک شخص کو دیا جاتا ہے۔ اس سال یہ ایوارڈ جناب سید وقار الدین کو دیئے جانے کی اعلیٰ سطح کی مشاورتی میٹنگ میں قطعیت دی گئی ہے۔ جاریہ ماہ کے اختتام پر نئی دہلی میں ایک پُراثر تقریب کا انعقاد عمل میں آئے گا جس میں عرب ممالک کے سفراء کے علاوہ دیگر ممالک کے سفرائ، مرکزی وزراء اور دیگر اہم شخصیتیں شرکت کریں گی۔ اس تقریب میں عرب لیگ کا باوقار ایوارڈ جناب سید وقار الدین کو پیش کیا جائے گا۔ جناب سید وقار الدین کو ماضی میں بھی ان کی ہند۔ عرب تعلقات کیلئے گرانقدر خدمات کے پیش نظر صدر مراقش کنگ محمد VI نے راشٹر پتی بھون میں منعقدہ تقریب میں میڈل سے نوازا۔ 2014 ء میں مملکتی وزیر خارجہ ای احمد نے بھی متحدہ عرب امارات کے سفارت خانہ میں منعقدہ تقریب میں سیویلین ایوارڈ دیا۔ صدر فلسطین مسٹر محمود عباس نے فلسطین کا باوقار ایوارڈ ’’ اسٹاف آف یروشلم ‘‘ دیا۔ جناب سید وقار الدین دنیا بھر میں تیسرے فرد ہیں جنہیں ’’ اسٹاف آف دی یروشلم ‘‘ دیا گیا۔ اقوام متحدہ میں فلسطین کو بحیثیت مملکت تسلیم کئے جانے پر اقوام متحدہ کی جانب سے فلسطین کو دیئے گولڈ میڈل کو سفیر فلسطین مسٹر عدنان ابوالحائجہ نے حیدرآباد میں ان کی رہائش گاہ پر دیا۔ اس کے علاوہ کئی ایوارڈس و اعزازات ریاستی، قومی و بین الاقوامی سطح پر جناب سید وقار الدین کو دیئے گئے۔ سفیر عراق متعینہ ہند مسٹر فخری حسن ال یحییٰ نے جناب سید وقار الدین کی بے لوث خدمات پر انہیں گلوبل سفیر فلسطین کے خطاب سے سرفرازکیا۔ عرب لیگ کی جانب سے جناب سید وقار الدین کو اس ایوارڈ کے اعلان پر عرب دنیا اور ملک میں خوشی کی لہر دوڑ گئی۔

TOPPOPULARRECENT