Friday , January 19 2018
Home / شہر کی خبریں / سیماآندھرا میں کانگریس کی ’’ بس یاترا ‘‘

سیماآندھرا میں کانگریس کی ’’ بس یاترا ‘‘

حیدرآباد 17 مارچ ( پی ٹی آئی ) مرکزی وزیر مسٹر کے چرنجیوی اور سیما آندھرا سے تعلق رکھنے والے کانگریس کے دوسرے قائدین تقسیم ریاست کے فیصلے پر عوامی ناراضگی کو دور کرنے کیلئے ساحلی آندھرا اور رائلسیما کے علاقہ میں ایک بس یاترا کا اہتمام کرینگے تاکہ رائے دہندوں اور پارٹی ورکرس سے رابطہ کیا جاسکے ۔ کہا جارہا ہے کہ تقسیم ریاست کے فیصلے سے

حیدرآباد 17 مارچ ( پی ٹی آئی ) مرکزی وزیر مسٹر کے چرنجیوی اور سیما آندھرا سے تعلق رکھنے والے کانگریس کے دوسرے قائدین تقسیم ریاست کے فیصلے پر عوامی ناراضگی کو دور کرنے کیلئے ساحلی آندھرا اور رائلسیما کے علاقہ میں ایک بس یاترا کا اہتمام کرینگے تاکہ رائے دہندوں اور پارٹی ورکرس سے رابطہ کیا جاسکے ۔ کہا جارہا ہے کہ تقسیم ریاست کے فیصلے سے کانگریس کو سیما آندھرا میں کافی مشکلات پیش آ رہی ہیں اور مجالس مقامی کے انتخابات میں اسے امیدوار بھی مشکل سے دستیاب ہورہے ہیں۔ اس صورتحال کو پیش نظر رکھ کر بس یاترا کے اہتمام کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔ چرنجیوی کو سیما آندھرا کانگریس تشہیری کمیٹی کا صدر نشین نامزد کیا گیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ 21 مارچ سے 27 مارچک تک سریکا کلم سے اننت پور تک پارٹی کارکنوں کے ساتھ اجلاس منعقد کئے جائیں گے ۔

یومیہ دو اضلاع کا احاطہ کیا جائیگا ۔ انہوں نے کہا کہ ہم پارٹی ورکرس کے حوصلوں کو بڑھاوا دینے کی کوشش کرینگے ۔ انہوں نے کہا کہ اس دوران ہم یہ واضح کرینگے کہ تقسیم ریاست کا فیصلہ کانگریس نے کیوں کیا ۔ اس کے عوامل کیا تھے اور اس کے عناصر کون تھے ۔ یہ واضح کیا جائیگا کہ سیما آندھرا کو کیا فوائد مل رہے ہیں ۔چرنجیوی کی قیادت میں اس مہم کا سریکا کلم ضلع سے آغاز ہوگا ۔ سینئر لیڈر انم رام نارائن ریڈی نے یہ بات بتائی ۔ انہوں نے کہا کہ بس یاترا کا اصل مقصد کانگریس ورکرس اور پارٹی کے حامیوں سے ہر ضلع میں ملاقات کرنا اور موجودہ تبدیلیوں اور مستقبل کے لائحہ عمل پر تبادلہ خیال کرنا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT