Saturday , December 15 2018

سیما آندھرا میں پرچہ نامزدگیوں کی تنقیح

لوک سبھا کے 59 و اسمبلی کے 507 پرچے مسترد

لوک سبھا کے 59 و اسمبلی کے 507 پرچے مسترد
حیدرآباد ۔ 22 ۔ اپریل : ( سیاست نیوز) : ریاست میں دوسرے مرحلہ کے تحت سیما آندھرا کے 25 حلقہ جات لوک سبھا اور 175 اسمبلی حلقہ جات کے لیے پرچہ جات نامزدگیوں کے ادخال کے بعد پرچہ جات نامزدگیوں کی جانچ کے دوران 25 لوک سبھا حلقہ جات میں جملہ 59 پرچوں کو مسترد کردیا گیا جبکہ ان 25 حلقوں کیلئے جملہ 455 امیدواروں نے اپنے پرچے داخل کئے تھے اور 59 امیدواروں کے پرچے کے مسترد کردئیے جانے کے بعد اب 396 امیدوار انتخابی میدان میں ہیں ۔ لیکن پرچہ جات نامزدگیوں سے دستبرداری اختیار کرنے کی آخری تاریخ کے بعد ہی انتخابی مقابلہ میں موجود امیدواروں کی قطعی فہرست معلوم ہوسکے گی ۔ چیف الکٹورل آفس ذرائع نے کہا کہ حلقہ لوک سبھا نندیال میں 8 حلقہ لوک سبھا کرنول میں 4 ، حلقہ لوک سبھا اننت پور سے 3 حلقہ کڑپہ سے 2 حلقہ راجم پیٹ سے دو اور حلقہ چتور سے ایک امیدوار کے پرچہ نامزدگیوں کو مسترد کردیا گیا اسی طرح 175 اسمبلی حلقوں کیلئے داخل کئے گئے 3426 امیدواروں کے پرچوں کے منجملہ 507 امیدواروں کے پرچوں کو مسترد کردیا گیا ۔ اس طرح اب 3425 امیدواروں کے منجملہ 2919 امیدوار انتخابی مقابلہ میں ہیں ۔ بتایا جاتا ہے کہ اضلاع چتور میں 280 امیدواروں کے منجملہ 55 امیدواروں کی نامزدگیاں مسترد کردی گئیں ۔ اننت پور میں 267 امیدواروں کے منجملہ 34 امیدواروں کے پرچہ جات نامزدگیاں مسترد کردی گئیں ۔ ضلع کرنول میں 342 امیدواروں کے منجملہ 69 امیدواروں کے پرچہ جات نامزدگیاں مسترد کردی گئیں ۔ اور ضلع کڑپہ میں 246 امیدواروں کے منجملہ 59 امیدواروں کے پرچہ جات نامزدگیاں مسترد کردی گئیں ۔

TOPPOPULARRECENT