Sunday , November 19 2017
Home / ہندوستان / سی بی آئی، جی بی آئی میں تبدیل مرکزی ادارہ میں گجرات کیڈر تعینات، ٹی ایم سی کا الزام

سی بی آئی، جی بی آئی میں تبدیل مرکزی ادارہ میں گجرات کیڈر تعینات، ٹی ایم سی کا الزام

نئی دہلی ۔ 16 ۔ ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) ترنمول کانگریس (ٹی ایم سی) نے آج لوک سبھا میں دہلی کے چیف منسٹر اروند کجریوال کی حمایت کی اور کجریوال کے پرنسپال سکریٹری کے دفتر پر سی بی آئی کے دھاوؤں پر حکومت کی سخت مذمت کی۔ ٹی ایم سی نے الزام عائد کیا کہ مودی حکومت کے تحت سنٹرل بیورو آف انویسٹی گیشن (سی بی آئی) اب گجرات بیورو آف انویسٹی گیشن (جی بی آئی) بن گئی ہے۔ ٹی ایم سی کے لیڈر سدیپ بندھو پادھیائے نے کہا کہ سی بی آئی دھاوؤں سے انہیں کافی تکلیف ہوئی ہے۔ انہوں نے حکومت کے اس دعوے کو مسترد کردیا کہ سی بی آئی ایک آزاد ادارہ ہے اور یہ دعویٰ بھی کیا کہ وزیراعظم کے علم و اطلاع کے بغیر سی بی آئی اپنے طور پر کام نہیں کرسکتی۔ تاہم حکومت نے ان کے اس الزام کو مسترد کردیا ۔ وزیر پارلیمانی امور وینکیا نائیڈو نے کہا کہ رشوت ستانی کے خلاف لڑائی میں پارلیمنٹ کو مضبوط بنانا چاہئے نہ کہ اس کو رکاوٹ کیلئے استعمال کیا جائے۔ وینکیا نائیڈو نے اصرار کیا کہ سی بی آئی نے دہلی کے چیف منسٹر کے دفتر پر دھاوا نہیں کیا اور اس کارروائی میں کوئی غلطی نہیں کی گئی۔ قانون اپنا کام کر رہا ہے اور اس قسم کے مسئلوں سے نمٹنا پارلیمنٹ کی ذمہ داری نہیں ہے۔ سی بی آئی کو آزاد رکھا جانا چاہئے اور کسی کارروائی کیلئے اس کو کسی کی اجازت نہیں ہونی چاہئے لیکن بندھو پادھیائے نے وزیراعظم کو اپنی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ سی بی آئی نے گجرات کیڈر کے سینئر افسران شامل کئے گئے ہیں اور ایک کا نام مودی سے مماثلت رکھتا ہے اور یہ ادارہ  اب جی بی آئی (گجرات بیورو آف انویسٹی گیشن) میں تبدیل ہوگیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT