Wednesday , January 23 2019

س5سال سے کم عمر بچوں کو راشن اشیاء نہ دینے کا فیصلہ حکومت کی نئی شرائط سے غریب عوام میں تشویش

حیدرآباد /7 اپریل (سیاست نیوز) تلنگانہ حکومت نے راشن شاپس کے ذریعہ تقسیم ہونے والی اشیائے ضروریہ پانچ سال سے کم عمر کے بچوں کو نہ دینے کا فیصلہ کیا ہے، جس سے غریب عوام میں تشویش پائی جاتی ہے۔ ٹی آر ایس حکومت نے نئے مالیاتی سال میں فوڈ سیکورٹی اسکیم کا اعلان کرکے غریب عوام میں خوشی کی لہر دوڑا دی تھی اور حکومت نے ہر عمر کے فرد کو فی کس 6 ک

حیدرآباد /7 اپریل (سیاست نیوز) تلنگانہ حکومت نے راشن شاپس کے ذریعہ تقسیم ہونے والی اشیائے ضروریہ پانچ سال سے کم عمر کے بچوں کو نہ دینے کا فیصلہ کیا ہے، جس سے غریب عوام میں تشویش پائی جاتی ہے۔ ٹی آر ایس حکومت نے نئے مالیاتی سال میں فوڈ سیکورٹی اسکیم کا اعلان کرکے غریب عوام میں خوشی کی لہر دوڑا دی تھی اور حکومت نے ہر عمر کے فرد کو فی کس 6 کیلو چاول فراہم کرنے اور انتخابی وعدہ کے مطابق اس اسکیم کو متعارف کرانے کا اعلان کیا تھا، مگر اب حکومت اس اسکیم سے استفادہ کے لئے شرائط نافذ کر رہی ہے۔ حکومت کا ادعا ہے کہ پانچ سال سے کم عمر والے بچوں کی تعداد بہت زیادہ ہے، لہذا انھیں فہرست سے علحدہ کیا جا رہا ہے۔ علاوہ ازیں بچوں کی تعداد زیادہ بتاکر ڈیلرس زیادہ اناج حاصل کر رہے ہیں۔ غریب عوام کا کہنا ہے کہ اگر اس معاملے میں حکومت کو ڈیلرس پر کسی طرح کا شک ہے تو وہ محکمہ جاتی تحقیقات کرواکر بے قاعدگیوں پر قابو پاسکتی ہے، لیکن وہ پانچ سال سے کم عمر کے بچوں کا بہانہ بناکر چاول کا کوٹہ برخاست کرنا چاہتی ہے، جب کہ اپریل کا راشن حاصل کرنے گریٹر میونسپل کارپوریشن حیدرآباد کے بشمول اضلاع کے راشن شاپس پر پہنچنے والے صارفین کو حکومت کے اس فیصلہ سے بہت بڑا جھٹکا لگا ہے۔ ذرائع کے بموجب محکمہ سیول سپلائز نے سروے کرتے ہوئے ایک رپورٹ پیش کی ہے، جس کے بعد حکومت نے یہ فیصلہ کیا۔

TOPPOPULARRECENT