Friday , November 24 2017
Home / شہر کی خبریں / شادی مبارک اسکیم میں لڑکی والوں کو دھوکہ

شادی مبارک اسکیم میں لڑکی والوں کو دھوکہ

می سیوا آپریٹر گرفتار، پاس بک اور اے ٹی ایم کا رڈ برآمد
حیدرآباد 23 مارچ (سیاست نیوز) شادی مبارک اسکیم کے نام پر خاتون کو دھوکہ دینے والے می سیوا آپریٹر کو ساؤتھ زون پولیس نے گرفتار کرلیا۔ 28 سالہ محمد زاہد علی ساکن کشن باغ نے می سیوا کے ذریعہ 40 سالہ فوزیہ بیگم ساکن بہادر پورہ کو اُس کی لڑکی کی شادی کے لئے منظورہ 51 ہزار کی رقم کا غبن کرتے ہوئے دھوکہ دیا۔ ڈپٹی کمشنر پولیس ساؤتھ زون مسٹر وی ستیہ نارائنا نے بتایا کہ فوزیہ بیگم سے زاہد علی نے شادی مبارک اسکیم کی درخواست کے ادخال کے لئے 4 ہزار روپئے لئے تھے۔ گزشتہ سال 17 مئی کو اورنگ آباد میں فوزیہ بیگم نے اپنی بیٹی سمیہ بیگم کی شادی شیخ مجیب سے کی تھی۔ می سیوا آپریٹر زاہد علی نے فوزیہ بیگم کو بذریعہ فون بتایا کہ منظورہ رقم حاصل کرنے کے لئے اُن کی بیٹی کی موجودگی لازمی ہے اور اِس سلسلہ میں لڑکی کے پاس بُک اور اے ٹی ایم کارڈ اپنے پاس رکھ لیا۔ کچھ دن بعد زاہد علی نے غوثیہ بیگم کو می سیوا سنٹر طلب کرکے 20 ہزار روپئے کی رقم حوالہ کی اور بتایا کہ اُن کی بیٹی کی شادی اورنگ آباد میں ہونے کے سبب 51 ہزار کی مقررہ رقم منظور نہیں ہوئی ہے۔ زاہد علی نے لڑکی کا اے ٹی ایم کارڈ استعمال کرتے ہوئے 31 ہزار کی رقم حاصل کرلی۔ دھوکہ دہی کا شکار خاتون نے بہادر پورہ پولیس میں شکایت درج کرائی جس کے نتیجہ میں اینٹی کرپشن بیورو کے ڈپٹی سپرنٹنڈنٹ آف پولیس جے اشوک کمار نے اسسٹنٹ کمشنر آف پولیس چارمینار کے اشوک چکرورتی کی مدد سے زاہد علی کو گرفتار کرلیا اور اُس کے قبضہ سے لڑکی کے پاس بُک، اے ٹی ایم کارڈ اور دیگر دستاویزات برآمد کرلئے۔

TOPPOPULARRECENT