Saturday , November 25 2017
Home / شہر کی خبریں / شادی مبارک میں 66 لاکھ کی زائد اجرائی ، پولیس تحقیقات میں انکشاف

شادی مبارک میں 66 لاکھ کی زائد اجرائی ، پولیس تحقیقات میں انکشاف

بے قاعدگیوں پر اینٹی کرپشن کی تحقیق ، 147 سے زائد افراد کو ایک سے زائد مرتبہ رقومات کی اجرائی
حیدرآباد۔ 11 ۔ نومبر (سیاست نیوز) محکمہ اقلیتی بہبود کی شادی مبارک اسکیم میں 66 لاکھ روپئے کی زائد اجرائی کا انکشاف ہوا ہے جس کا پتہ حکومت کی جانب سے شروع کی گئی پولیس تحقیقات میں ہوا۔ اسکیم میں مختلف سطح پر بے قاعدگیوں کی شکایات پر حکومت نے اینٹی کرپشن بیورو کے عہدیداروں کی ٹیم تشکیل دی جس میں شادی مبارک اسکیم کے استفادہ کنندگان اور امداد کی اجرائی کا جائزہ لیا۔ تحقیقات کے دوران پتہ چلا کہ 147 سے زائد افراد کو ایک سے زائد مرتبہ رقم جاری کی گئی ہے۔ مجموعی طور پر 66 لاکھ روپئے کی زائد اجرائی کا پتہ چلا جن میں سے 53 لاکھ روپئے کے کھاتوں کو منجمد کردیا گیا ہے۔ سکریٹری اقلیتی بہبود سید عمر جلیل نے بتایا کہ 53 لاکھ روپئے دوبارہ سرکاری خزانہ میں واپس ہوچکے ہیں جبکہ باقی رقم کی وصولی کا کام جاری ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اس بے قاعدگی کے ذمہ دار افراد کی نشان دہی کرلی گئی جن کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔ انہوں نے بتایا کہ پے اینڈ اکاؤنٹ سے متعلق شعبہ میں یہ غلطی ہوئی ہے اور ابتدائی تحقیقات میں اس کا پتہ چلا ہے۔ انہوں نے درمیانی افراد کے رول اور حیدرآباد و ررنگا ریڈی اقلیتی بہبود کے دفاتر کے بعض ملازمین کے بے قاعدگیوں میں ملوث ہونے کی شکایات پر تبصرہ کرتے ہوئے اعتراف کیا کہ انہیں بھی اس طرح کی شکایت ملی ہیں ، جن کی جانچ کی جارہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اسکیم کو بے قاعدگیوں سے پاک کرنے کے اقدامات کئے جائیں گے۔ واضح رہے کہ حیدرآباد و رنگا ریڈی میں اس اسکیم میں کئی بے قاعدگیوں کی شکایت ملی تھیں جس کے بعد ڈائرکٹر جنرل اینٹی کرپشن بیورو  اے کے خاں نے تحقیقات کا آغاز کیا۔ پولیس عہدیداروں کی ٹیم اب تک کی منظورہ درخواستوں اور زیر التواء درخواستوں کی جانچ کرتے ہوئے حقیقی مستحقین کا پتہ چلانے کی کوشش کر رہی ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ تحقیقات کے دوران کئی ملازمین اور عہدیداروں کی ملی بھگت بھی بے نقاب ہوگی۔

TOPPOPULARRECENT