Tuesday , June 19 2018
Home / عرب دنیا / شامی باغیوں کے گڑھ پر تازہ فوجی حملے

شامی باغیوں کے گڑھ پر تازہ فوجی حملے

خونریز تصادم روکنے فی الفور جنگ بندی کے مطالبات میں شدت
دوما (شام) ۔ 23 فروری (سیاست ڈاٹ کام) شامی شہر غوطہ جو گذشتہ چند دن تک بھی باغیوں کا طاقتور گڑھ تھا، بدستور فوجی حملوں کا نشانہ بنا ہواہ ے۔ بشارالاسد کے فورس کی طرف سے مشرقی غوطہ میں تازہ ترین بمباری کے نتیجہ میں درجنوں افراد ہلاک ہوگئے ہیں جس کے ساتھ ہی پانچ روزہ فوجی کارروائیوں میں ہلاک ہونے والے شہریوں کی تعداد 400 سے زائد ہوگئی ہے۔ شام میں گذشتہ سات سال سے جاری تصادم میں یہ بدترین اور انتہائی خونریز فوجی کارروائیاں سمجھی جارہی ہیں جس کے نتیجہ میں تاحال 400 سے زائد مرد ، خواتین اور بچے ہلاک دیگر سینکڑوں زخمی ہوئے ہیں۔ فضائی حملوں اور بمباری میں کئی گھر منہدم ہوجانے کے سبب ہزاروں افراد بے گھر ہوگئے ہیں جس کے ساتھ ہی اس علاقہ میں انسانی بحران جیسی صورتحال پیدا ہورہی ہے اور مختلف اداروں نے فی الفور جنگ بندی کے ساتھ عوام کو پینے کا پانی، غذا، ادویات اور محفوظ رہائشی کیمپوں کی فراہمی پر زور دیا ہے۔ شام کی بشارالاسد حکومت کے حامی ملک روس نے کہا کہ 30 روزہ جنگ بندی کے لئے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں ایسا کوئی معاہدہ نہیں کیا گیا تھا جس میں مشرقی غوطہ میں محصور عام شہریوں کے انخلاء اور انہیں غذائی رسدات کی فراہمی کی اجازت دی گئی ہے۔

TOPPOPULARRECENT