Monday , December 18 2017
Home / دنیا / شام سے فوج واپس طلب کرنے سے ایران کا انکار

شام سے فوج واپس طلب کرنے سے ایران کا انکار

تہران۔ 23 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) ایرانی حکام نے شام میں صدر بشارالاسد کے دفاع کے لیے اتاری گئی فوج کی واپسی کے حوالے سے سامنے آنے والی خبروں کی سختی سے تردید کی ہے اور کہا ہے کہ تہران کا دمشق سے اپنی فوجیں واپس بلانے کا قطعاً کوئی ارادہ نہیں ہے اور نہ ہی مستقبل میں شام میں ایرانی پاسداران انقلاب کی تعداد کم کی جائے گی۔ایران کی مسلح افواج کے سربراہ کے معاون برائے پاسیج ملیشیا بریگیڈیئر مسعود جزائری نے کہا ہے کہ دمشق سے ایرانی فوج کی واپسی کی خبروں میں کوئی صداقت نہیں ہے اور نہ ہی ایران شام میں اپنی عسکری سرگرمیوں میں کسی قسم کی کمی کا ارادہ رکھتا ہے۔
شام سے متعلق ایران کی پالیسی میں کوئی تبدیلی نہیں
درایں اثناء پاسداران انقلاب کے ڈپٹی چیف بریگیڈیئر حسین سلامی کا کہنا ہے کہ شام کے بارے میں تہران کی پالیسی میں کسی قسم کی کوئی تبدیلی نہیں آئی ہے۔ ایران ،شام میں متعین اپنی فوج کی تعداد میں کمی بھی نہیں کرے گا۔ فارس نیوز ایجنسی کی مطابق بریگیڈیئر حسین سلامی کا ایک بیان مغربی اخبارات میں شائع ہوا ہے جس میں انہوں نے کہا کہ شام میں ایران کی فوج میں کمی یا اضافہ تہران کی دمشق سے متعلق پالیسی کا حصہ ہے۔ ضرورت کے تحت شام میں ایرانی فوج کی تعداد میں کمی بیشی ہوتی ہے۔ فی الحال ایران ،شام میں اپنی فوج کی تعداد میں کمی نہیں کرے گا۔

TOPPOPULARRECENT