Wednesday , December 13 2017
Home / Top Stories / شام : فضائی حملوں سے 22 افراد ہلاک

شام : فضائی حملوں سے 22 افراد ہلاک

بیشتر تعداد اسکول کے روبرو ہلاک ہونے والے بچوں پر مشتمل
بیروت۔ 26 اکتوبر (سیاست ڈاٹ کام) شام میں فضائی حملوں سے 22 افراد جن میں سے بیشتر بچے تھے ، ہلاک ہوگئے جبکہ جنگی طیاروں نے ایک رہائشی علاقہ میں واقع اسکول کی عمارت پر حملہ کیا۔ شمالی صوبہ ادلیب باغیوں کے زیرقبضہ ہے۔ سب سے پہلے سوال نامہ کا جواب دینے والے شامی شہری دفاع برائے ادلیب کی ٹیم نے کہا کہ 22 افراد ہلاک اور کم از کم 50 زخمی ہوگئے جبکہ دیہات ہاس پر فضائی حملے کئے گئے۔ ہلاک ہونے والوں کی بیشتر تعداد بچوں پر مشتمل تھی۔ گروپ نے فیس بک کے اپنے صفحہ پر یہ اطلاع تحریر کی ہے۔ ادلیب ،شام کی سب سے بڑی اپوزیشن کا مستحکم گڑھ ہے حالانکہ باقاعدگی سے شام اور روس کے جنگی طیارے امریکہ اور اتحادی افواج کے جنگی طیارے دولت اسلامیہ کے عسکریت پسندوں کو نشانہ بناکر حملہ کیا کرتے ہیں۔ انسانی حقوق کارکنوں نے آل لائن جو جھلکیاں شائع کی ہیں، ان میں کثیر دھویں کا بادل ان حملوں کے مقام سے فضاء میں اُٹھتا ہوا دکھائی دیتا ہے۔ بچاؤ کارکن فوری مقام واردات پر پہنچ گئے۔ یہاں پر سڑکیں تباہ ہوگئی تھیں اور عمارتیں منہدم ہوچکی تھیں۔ حکومت شام کی افواج کا کرد حمایت یافتہ جنگجوؤں پر یہ اولین حملہ تھا۔ ترکی کے سرکاری خبر رساں ادارہ نے حملہ کا دن ظاہر نہیں کیا تاہم کہا کہ شامی اپوزیشن کے کم از کم 2 جنگجو ہلاک اور دیگر 5 زخمی ہوئے ہیں۔ شامی رصد گاہ برائے انسانی حقوق کے سربراہ رامی عبدالرحمن نے کہا کہ ہیلی کاپٹر کے ذریعہ شدید حملے کرد زیرقیادت جنگجوؤں پر اور ترکی حمایت یافتہ افواج پر قصبہ تل مدیق میں ہنوز جاری ہیں۔

TOPPOPULARRECENT