شام میں اسرائیل فوج کی کارروائی امریکہ و روس کا اظہار تشویش

تل ابیب،11فروری(سیاست ڈاٹ کام )اسرائیل کا کہنا ہے کہ اس نے شام میں گذشتہ 30 برس کے دوران سب سے بڑا فضائی حملہ کیا ہے ۔اسرائیلی دفاعی فوج کے ترجمان نے بی بی سی کو بتایا کہ شام کے دارالحکومت دمشق کے قریب کم سے کم 12 مقامات کو نشانہ بنایا گیا ہے ۔یہ 1982 کی لبنان جنگ کے بعد شام کے خلاف اپنی نوعیت کی پہلی بڑی کارروائی ہے ۔ صدرروس ولادیمیر پوٹن نے فون پر وزیرِ اعظم اسرائیل بنجامن نیتن یاہو سے بات کی اور شام میں فضائی حملوں پر تبادلئہ خیال کیا۔جبکہ اس موقعہ پر اسرائیلی وزیر اعظم نیتن یاہو نے کہا کہ کہ ان کا ملک ایران کی جانب سے شام میں فوجی طاقت میں اضافے کی کسی بھی کوشش کی مخالفت کرے گا۔امریکہ نے بھی اس کے بقول ایران کی جانب سے عدم استحکام پیدا کرنے والی سرگرمیوں پر خدشات کا اظہار کیا۔اسرائیل کے مطابق ایف 16 طیارے کو شام کی سرزمین سے طیارہ گرانے والی توپوں سے نشانہ بنایا گیا جس کے نتیجے میں جہاز گر گیا۔

TOPPOPULARRECENT