Thursday , July 19 2018
Home / Top Stories / شام پر حملوں کیخلاف مغربی ممالک کو ایران کا انتباہ

شام پر حملوں کیخلاف مغربی ممالک کو ایران کا انتباہ

تہران 14 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) شام پر امریکہ، برطانیہ اور فرانس کے فضائی حملوں کی لہر کے درمیان ایران ’علاقائی عواقب و نتائج‘ کی دھمکی دی ہے۔ ایرانی وزارت خارجہ کے بیان میں کہا گیا ہے کہ ’امریکہ اور اس کے حلیفوں کے پاس کوئی ثبوت نہیں ہے اور کیمیائی اسلحہ پر امتناع سے متعلق ادارہ کی طرف سے اس مسئلہ پر کوئی موقف اختیار کئے جانے تک انتظار کے بغیر ہی فوجی حملہ کردیا گیا ہے‘‘۔ بیان میں بین الاقوامی قوانین کی خلاف ورزی کی مذمت کرتے ہوئے مزید کہا گیا ہے کہ ’’وہ (امریکہ، برطانیہ اور فرانس) مہم پسندی پر مبنی اس کارروائی کے علاقائی نتائج اور عواقب کے ذمہ دار ہوں گے‘‘۔ روس کے ساتھ ایران بھی شام کے صدر بشارالاسد کا ایک کلیدی حامی و مددگار ہے جو اُنھیں فوجی مشیران اور زمینی فورسیس کے لئے رضاکار فراہم کررہا ہے۔ تہران کے عہدیداروں نے کہاکہ مغربی طاقتیں شام میں گزشتہ ہفتہ باغیوں کے زیرقبضہ طاقتور ٹھکانوں پر مبینہ کیمیائی حملوں کو دراصل شامی حکومت کو میدان جنگ میں حاصل ہونے والی فتح کو پامال کرنے کے لئے ایک بہانہ کے طور پر استعمال کررہے ہیں۔ ایرانی وزارت خارجہ نے کہاکہ ’یہ جارحیت دہشت گردوں کو مشرقی غوطہ میں ہونے والی شکست کا ازالہ کرنے کے منصوبوں پر مبنی ہے۔ شامی حکومت کے فورسیس نے باغیوں کے زیرکنٹرول اس علاقہ پر حال ہی میں دوبارہ قبضہ کرلیا ہے‘‘۔ مشرق وسطیٰ میں بڑھتی ہوئی کشیدگی کی علامت کے طور پر پیر کو ایک شامی فوجی اڈہ پر ہونے والے فضائی حملے میں سات ایرانی ہلاک ہوگئے تھے اور ایران نے اس حملہ کے لئے اسرائیل کو مورد الزام ٹھہرایا تھا۔

TOPPOPULARRECENT