Sunday , November 19 2017
Home / Top Stories / شاہ رخ ’پاکستانی ایجنٹ ‘ اور’مخالف قومیت پسند‘

شاہ رخ ’پاکستانی ایجنٹ ‘ اور’مخالف قومیت پسند‘

رہتے ہیں یہاں دل پاکستان میں:وجئے ورگیا۔پڑوسی ملک بھیج دیا جائے :سادھوی پراچی
نئی دہلی / مظفر نگر ۔ 3 ۔ نومبر (سیاست ڈاٹ کام) بالی ووڈ سوپر اسٹار شاہ رخ خان کو آج ’’مخالف قومیت پسند‘‘ اور ’’پاکستانی ایجنٹ‘‘ قرار دیا گیا ہے۔ بی جے پی اور ہندوتوا  کے سینئر قائدین نے فلم اداکار کے ’’انتہائی عدم رواداری‘‘ تبصرہ پر شدید ردعمل کا اظہار کیا ہے۔ بی جے پی جنرل سکریٹری اور مدھیہ پردیش سابق وزیر وجئے ورگیا نے کہا کہ شاہ رخ خان ہندوستان میں ہیں لیکن ان کا دل پاکستان میں رہتا ہے۔ واضح رہے کہ ایک دن قبل شاہ رخ خان نے کہا تھا کہ ملک میں عدم رواداری انتہا کو پہنچ گئی ہے۔ انہوں نے عدم رواداری کے ماحول کے خلاف صدائے احتجاج بلند کی تھی ۔ دوسری طرف وشوا ہندو پریشد کی متنازعہ لیڈر سادھوی پراچی نے شاہ رخ خان کو پاکستانی ایجنٹ قرار دیا اور کہا کہ انہیں پاکستان واپس بھیج دیا جانا چاہئے ۔ وجئے ورگیا ان قائدین میں سے ایک ہیں جنہوں نے بی جے پی کا بہار میں انتخابی لائحہ عمل تیار کیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ شاہ رخ خان ہندوستان میں رہتے ہیں لیکن ان کا دل پاکستان میں ہوتا ہے۔ ان کی فلمیں کروڑہا روپئے کا بزنس کرتی ہے ، اس کے باوجود وہ سمجھتے ہیں کہ ہندوستان میں عدم رواداری پائی جاتی ہے ۔ وجئے ورگیا نے سلسلہ وار ٹوئیٹس میں یہ بات کہی۔

انہوں نے کہا کہ اس طرح کا طرز عمل مخالف قومیت پسند نہیں تو پھر کیا ہے۔ ہندوستان اقوام متحدہ سلامتی کونسل کا مستقل رکن بننے کی سنجیدہ کوشش کر رہا ہے اور تمام مخالف ہند طاقتیں بشمول پاکستان اس کے خلاف سازش کر رہی ہیں۔ بی جے پی لیڈر نے کہا کہ ملک میں عدم رواداری کا ماحول پیدا کرنے کی یہ کوشش سازش کا حصہ ہے۔ شاہ رخ خان کا عدم رواداری کے بارے میں تبصرہ یہ ظاہر کرتا ہے کہ وہ پاکستان اور مخالف ہند طاقتوں کا لب و لہجہ اختیار کئے ہوئے ہیں۔ آج ایسے وقت جبکہ ساری دنیا ہندوستان کا احترام کررہی ہے، اسی وقت ملک میں عدم رواداری میں اضافہ کی باتیں کی جارہی ہے تاکہ دنیا کے سامنے اسے کمزور پیش کیا جاسکے۔ بی جے پی لیڈر نے ممبئی میں دھماکوں کے تعلق سے شاہ رخ خان سے سوال کیا۔ انہوں نے کہا کہ 1993 ء دھماکوں میں جب بے شمار لوگ ہلاک ہوگئے اور 26/11 کو جب ممبئی پر حملہ کیا گیا ، اس وقت وہ (شاہ رخ خان) کہاں تھے۔ فلم اداکار شاہ رخ خان کل 50 سال کے ہوگئے اور انہوں نے ملک میں ’’عدم رواداری کی انتہا‘‘ پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا تھاکہ اختراع پسندی اور مذہب کے معاملہ میں عدم رواداری سے ملک کو نقصان ہوگا ۔ دوسری طرف سادھوی پراچی نے مظفر نگر میں کورٹ کامپلکس میں ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ شاہ رخ خان کو پڑوسی ملک پاکستان چلے جانا چاہئے ۔ وشوا ہندو پریشد لیڈر نے اس سے پہلے بھی متنازعہ بیانات دیتے ہوئے فلم اداکار سلمان خان ، شاہ رخ خان اور عامر خان کو نشانہ بنایا تھا۔انہوں نے کہا تھا کہ یہ تینوں تشدد کا کلچر فروغ دے رہے ہیں ، لہذا نوجوانوں کو چاہئے کہ بالی ووڈ کی تھری مورتیوں کو اپنا آئیڈیل نہ بنانے کا مشورہ دیا۔

TOPPOPULARRECENT