Wednesday , November 22 2017
Home / ہندوستان / شاہ رخ کو مسلمان ہونے پر نشانہ نہ بنایا جائے : سینا

شاہ رخ کو مسلمان ہونے پر نشانہ نہ بنایا جائے : سینا

ممبئی 6 نومبر ( سیاست ڈاٹ کام ) شاہ رخ خان پر عدم رواداری ریمارک پر بی جے پی کی سخت تنقیدوں کے جواب میں شیوسینا نے کہا کہ اداکار کو پاکستان جانے کا مشورہ دینا در اصل پارٹی کی دوہری پالیسی کو ظاہر کرتا ہے ۔ شیوسینا نے پارٹی ترجمان سامنا کے ایک اداریہ میںکہا کہ بی جے پی کے چیف منسٹر دیویندر فرنویس نے پاکستانی گلوکار غلام علی کو ریاست میں آکر پروگرام پیش کرنے کی دعوت دی اور مکمل سکیوریٹی فراہم کرنے کا وعدہ کیا تھا ۔ ایک جانب آپ پاکستانی فنکاروں کو ہندوستان مدعو کرتے ہیں اور دوسری جانب شاہ رخ کو پاکستان جانے کا مشوہر دیتے ہیں۔ یہ دوہری پالیسی ہے جس پر عمل کیا جا رہا ہے ۔ شاہ رخ خان ایک فنکار ہے اور انہیں صرف اس لئے نشانہ بنانا کہ وہ مسلمان ہیں ‘ درست نہیں ہے ۔بی جے پی پر تنقید کرتے ہوئے اداریہ میں کہا گیا ہے کہ شاہ رخ خان کے ریمارکس پر جو تنازعہ پیدا ہوا ہے اس سے وہ چہرے بے نقاب ہوگئے ہیں جنہوں نے غلام علی کے خلاف شیوسینا کے احتجاج کی مخالفت کی تھی ۔ انہوں نے کہا کہ سیاستدانوں کو چاہئے کہ وہ رواداری اور عدم رواداری کی بحث میں شاہ رخ خاں کو محض مسلمان ہونے کی وجہ سے نہ گھسیٹیں۔ شیوسینا نے ہند ۔ پاک کے مابین تعلقات بہتر ہونے تک ہندوستان نہ آنے غلام علی کے فیصلے کی ستائش بھی کی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT