Thursday , May 24 2018
Home / Top Stories / شاہ سلمان کے محل پر حوثیوں کا میزائیل حملہ ناکام

شاہ سلمان کے محل پر حوثیوں کا میزائیل حملہ ناکام

یمامہ محل میں بجٹ کی پیشکشی سے قبل عرب اتحادی فورسیس نے میزائیل کو ناکارہ بنادیا
ریاض 19 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) سعودی عرب نے آج کہاکہ اس نے یمن میں ایران کے تائید یافتہ حوثی باغیوں کی طرف سے ریاض پر داغے گئے ایک میزائیل کو روک دیا ہے۔ حوثی جنگجوؤں نے اعلان کیا ہے کہ سعودی عرب کے شاہ سلمان کی سرکاری رہائش ’قصر یمامہ‘ کو نشانہ بناتے ہوئے اُنھوں نے یہ میزائیل داغا تھا۔ ریاض میں اس تازہ ترین میزائیل کو ’ایرانی حوثی‘ قرار دیا ہے۔ فرانس کے عالمی خبررساں ادارہ اے ایف پی کے ایک نامہ نگار نے کہاکہ عالمی معیاری وقت کے مطابق 1050 بجے سعودی بجٹ کی پیشکشی سے عین قبل ایک بڑے دھماکہ کی آواز سنائی دی۔ بالعموم سعودی عرب کے شاہ ہی ’یمامہ محل‘ میں بجٹ کا اعلان کیا کرتے ہیں۔یمن کے شیعہ حوثی باغیوں کے خلاف لڑائی میں مصروف سعودی عرب کے زیرقیادت اتحاد نے آج کہاکہ اُس نے جنوبی ریاض کی سمت داغے گئے ایک میزائیک کو رول لیا ہے۔ تاہم یمن باغیوں نے کہا ہے کہ اس مملکت کے دارالحکومت میں واقع ایک شاہی محل کو نشانہ بناتے ہوئے یہ میزائیل داغا گیا تھا۔ سعودی عرب کے سرکاری ٹیلی ویژن نے عرب اتحاد کے اس دعویٰ کا اعلان کیا۔ جب سعودی عرب کے شہریوں نے سوشل میڈیا پر بعض ویڈیوز پوسٹ کئے تھے جن میں آسمان پر دھویں کا ایک چھوٹا بادل دیکھا جارہا تھا۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ناکارہ بنائے جانے والے میزائیل سے کوئی نقصان نہیں پہونچا ہے۔ یمنی حکومت کے باغی حوثیوں کے نام سے مشہور شیعہ جنگجوؤں کے ایک ترجمان محمد عبدالسلام نے یمن میں کہاکہ اُنھوں نے یمامہ محل کو نشانہ بناتے ہوئے یہ بیلسٹک میزائیل داغا تھا۔ محمد عبدالسلام نے ٹوئٹر پر لکھا کہ اس حملے میں بیلسٹک میزائیل ’’والکینو ۔ ایچ 2‘‘ استعمال کیا گیا تھا۔ ریاض پر حوثیوں کا 4 نومبر کے بعد یہ دوسرا میزائیل حملہ ہے۔ اُنھوں نے گزشتہ ماہ ریاض ایرپورٹ کو نشانہ بناتے ہوئے میزائیل داغا تھا جس کو ہدف پر پہونچنے سے قبل مار گیا گیا تھا۔

TOPPOPULARRECENT