Thursday , August 16 2018
Home / شہر کی خبریں / شدید بارش سے آبپاشی پراجکٹس کی سطح میں اضافہ

شدید بارش سے آبپاشی پراجکٹس کی سطح میں اضافہ

ہریش راؤ کا اعلیٰ سطحی اجلاس، متعلقہ عہدیداروں کو چوکسی کی ہدایت

حیدرآباد۔/12 اگسٹ، ( سیاست نیوز) وزیر آبپاشی ہریش راؤ نے ریاست میں گزشتہ دو دن سے جاری بارش کے باعث پراجکٹس کی صورتحال کا اعلیٰ سطحی اجلاس میں جائزہ لیا۔ بڑے اور متوسط پراجکٹس میں پانی کے بہاؤ کا جائزہ لیا گیا۔ جائزہ اجلاس میں آبپاشی کے اعلیٰ عہدیداروں اور انجینئرس نے شرکت کی۔ ہریش راؤ نے عہدیداروں کو ہدایت دی کہ وہ پانی کے بہاؤ اور آمد کے سلسلہ میں وقفہ وقفہ سے انہیں اطلاع دیں۔ عہدیداروں کو چوکسی کی اطلاع دیتے ہوئے ہریش راؤ نے کہا کہ پانی کی سطح پر مسلسل نظر رکھی جائے۔ انہوں نے کہا کہ پراجکٹس کے علاوہ نشیبی علاقوں میں پانی کے بہاؤ کی صورت میں عوام کو بروقت چوکس کیا جانا چاہیئے۔ آبپاشی کے عہدیداروں نے کہاکہ بارش کے سبب کئی پراجکٹس میں پانی کی سطح میں اطمینان بخش حد تک اضافہ ہوا ہے اس سے زرعی شعبہ کو فصلوں کیلئے سربراہی میں مدد ملے گی۔ آبپاشی کے اعلیٰ عہدیداروں مرلیدھرن، ناگیندر راؤ، ہری رام اور او ایس ڈی سریدھر دیشپانڈے نے اجلاس میں شرکت کی۔ ہریش راؤ نے کہا کہ پراجکٹس کے انجینئرس 24 گھنٹے چوکسی برقرار رکھیں اور پانی کے بہاؤ میں اضافہ کی صورت میں ضلع نظم و نسق کو چوکس رکھنے کی ہدایت دی گئی۔ جل سودھا میں منعقدہ اجلاس میں عہدیداروں نے بتایا کہ گوداوری بیسن کے حدود میں کڈم پراجکٹ میں پانی کی آمد 50958 کیوسک ہے جبکہ 61277 کیوسک پانی کا اخراج عمل میں آرہا ہے۔ایلم پلی میں اِنفلو187037 کیوسک ہے اور 27 گیٹوں کے ذریعہ 289184 کیوسک پانی چھوڑا جارہا ہے۔ ریاست میں 36 کے اوسط آبپاشی پراجکٹس میں سے 19 میں پانی کی تیز آمد کا سلسلہ جاری ہے۔ گوداوری طاس میں 16 اور کرشنا میں 3 پراجکٹس کی سطح آب مکمل ہوچکی ہے آئندہ مزید دو دنوں تک دو تین پراجکٹس میں پانی کی آمد کا سلسلہ جاری رہے گا۔ ہریش راؤکو مختلف اضلاع میں پراجکٹس کی صورتحال سے واقف کرایا گیا۔

TOPPOPULARRECENT