Tuesday , December 11 2018

ششی کپور کا جسد خاکی سپرد آتش

ممبئی۔ 5 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) ممبئی میں یوں تو گزشتہ دو دنوں سے بارش ہورہی ہے لیکن اس کے باوجود بالی ووڈ کے آنجہانی اداکار ششی کپور کی آخری رسومات سے شرکت کے لئے آنے والوں کے حوصلے سرد نہیں پڑے۔ انہیں آج سانتاکروز ہندو برقی شمشان گھاٹ میں ٔنذرآتش کردیا گیا۔ یاد رہے کہ کل ان کا انتقال اندھیری کے کوکیلابین امبانی ہاسپٹل میں ہوا تھا۔ ان کی عمر 79 سال تھی۔ انہیں سرکاری اعزاز کے ساتھ سپرد آتش کیا گیا۔ قبل ازیں ان کے جسد خاکی کو ترنگے ترنگے پرچم میں لپٹا گیا اور پھر ان کے اعزاز میں پولیس نے تین راؤنڈس فائر کئے اور اس کے بعد ایک منٹ کی خاموشی اختیار کی گئی۔ سینکڑوں افراد چھتریوں اور رین کوٹ کے ساتھ شمشان گھاٹ میں موجود تھے۔ اس موقع پر امیتابھ بچن، ابھیشیک بچن، سیف علی خاں، شاہ رخ خان، نندیتا داس، لارا دتہ اور ان کے شوہر مہیش بھوپتی موجود تھے جبکہ قبل ازیں آنجہانی اور عامر خان نے ان کے ارکان خاندان کو پرسہ دیا۔ شمشان گھاٹ فلمی ہستیوں کے آنے کا سلسلہ کافی دیر تک جاری رہا جن میں راکیش اوم پرکاش مہرہ ، پونم ڈھلون، شکتی کپور، سچن، سپریا پاٹھک، سریش اوبرائے اور ڈانس ڈائریکٹر سروج خان بھی شمشان گھاٹ پہونچے۔ یوں تو ششی کپور کی ایک سے بڑھ کر ایک ہٹ فلمیں رہیں لیکن امیتابھ بچن کے ساتھ ان کی جوڑی کو ہمیشہ یاد کیا جائے گا جنہوں نے 10 سے زائد فلموں میں ایک ساتھ کام کیا۔ ششی کپور کو ان کی زندگی کا مختصر لیکن بہترین ڈائیلاگ ’’میرے پاس ماں ہے‘‘ دینے والے سلیم خاں نے بھی ان کی آخری رسومات سے شرکت کی جبکہ ان کے تینوں بچے کنال، کرن اور سنجنا بھی شمشان گھاٹ میں موجود تھے۔

TOPPOPULARRECENT