Saturday , September 22 2018
Home / شہر کی خبریں / شفا خانہ یونانی کے زیریں ملگیاں غیر قانونی فروخت

شفا خانہ یونانی کے زیریں ملگیاں غیر قانونی فروخت

چارمینار پیدل راہرو پراجکٹ کے کامو ںکے دوران بلدیہ اور ٹریفک پولیس کی کارروائی کے دوران انکشاف
حیدرآباد۔8مارچ(سیاست نیوز) شفاء خانہ یونانی چارمینار کے نیچے موجود ملگیوں کے مالکین کو نوٹس جاری کرتے ہوئے انہیں جلد طلب کیا جائے گا ۔ چارمینار پیدل راہرو پراجکٹ کے کاموں کے دوران مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباداور محکمہ ٹریفک پولیس کی جانب سے کی گئی کاروائی کے بعد ہوئے انکشاف نے قلی قطب شاہ اربن ڈیولپمنٹ اتھاریٹی ‘ حیدرآباد میٹروپولیٹین ڈیولپمنٹ اتھاریٹی اور محکمہ بلدی نظم و نسق کو طویل نیند سے جگادیا ہے۔بتایاجاتاہے کہ تینوں اداروں کی جانب سے شفاء خانہ یونانی چارمینار کے نیچے ٹھیلہ بنڈی رانوں کو مختص کی گئی ملگیات فروخت کردی گئی ہیں اور ان ملگیوں کے مالکین کی منتقلی بھی عمل میں لائی جا چکی ہے اور قانونی اعتبار سے حکومت کی جانب سے حوالے کردہ ان ملگیوںکی فروخت اور منتقلی جائز نہیں ہے اسی لئے قلی قطب شاہ اربن ڈیولپمنٹ اتھاریٹی سے محکمہ بلدی نظم و نسق اور حیدرآباد میٹروپولیٹین ڈیولپمنٹ اتھاریٹی نے ان افراد کی فہرست طلب کرلی ہے جنہیں یہ ملگیاں الاٹ کی گئی تھیں۔ قلی قطب شاہ اربن ڈیولپمنٹ اتھاریٹی کے عہدیداروں کے مطابق چارمینار کے دامن میں ٹھیلہ بنڈی رانوں کو برخواست کروانے کے لئے 80 کی دہائی میں ان ملگیات کی حوالگی عمل میں لائی گئی تھی اور جن لوگوں کو ملگی حاصل نہیں ہو پائی تھی انہیں ٹھیلہ بنڈی لگانے کی اجازت دی گئی تھی لیکن ٹھیلہ بنڈی رانوں کی تعداد میں بتدریج اضافہ ہوتا گیا اور جن لوگوں کو ملگی الاٹ کی گئی تھی ان لوگوں نے ان ملگیوں کو کرایہ پر دیتے ہوئے دوبارہ ٹھیلہ بنڈی لگانا شروع کردیا اور بعض ملگی کے مالکین نے ان ملگیوں کو فروخت بھی کردیا اور ان ملگیوں کی منتقلی بھی عمل میں لائی جاچکی ہے۔ باوثوق ذرائع سے موصولہ اطلاعات کے مطابق جی ایچ ایم سی ‘ ایچ ایم ڈی اے اور قلی قطب شاہ اربن ڈیولپمنٹ اتھاریٹی کے عہدیداروں نے اب تک ایسی 16ملگیوں کی نشاندہی کی ہے جو جن کے مالکین کا کوئی پتہ نہیں ہے اور ان ملگیوں میں غیر مجاز افراد کاروبار کر رہے ہیں۔ بتایاجاتاہے کہ جن ملگیوں میں غیر مجاز افراد کاروبار کر رہے ہیں ان کے خلاف قانونی کاروائی کرتے ہوئے ان کے تخلیہ کو یقینی بنانے کے ساتھ ساتھ ان ملگیوں کے از سر نو ہراج کی منصوبہ بندی کی جا رہی ہے ۔ عہدیداروں کا کہناہے کہ یہ جو ملگیات تعمیر کرتے ہوئے حوالہ کی گئی ہیں ان کے مالکانہ حقوق اب بھی حکومت کے پاس موجود ہیں کیونکہ یہ ملگیات شفاء خانہ یونانی چارمینار کی جائیداد میں ہیں اور یہ حکومت کی ملکیت ہے لیکن ان ملگیوں کی منتقلی اور فروخت ممکن نہیں ہے۔ اسی لئے محکمہ بلدی نظم و نسق نے اس مسئلہ پر قانونی رائے حاصل کرتے ہوئے کاروائی کا فیصلہ کیا ہے تاکہ سرکاری املاک کے تحفظ کو یقینی بنایا جا سکے۔

TOPPOPULARRECENT