Thursday , December 13 2018

شمالی کوریا پر امریکی قرارداد کو چین نے ناکام بنادیا

اقوام متحدہ، 3 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) چین نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی کمیٹی میں شمالی کوریا کو لے کر پیش کئے گئے ایک امریکی قرارداد کو روک دیا ہے ۔اس قرارداد میں شمالی کوریا پر عائد بین الاقوامی پابندیوں کی خلاف ورزی کرنے والے 33 بحری جہاز، 27 شپنگ کمپنیوں اور تائیوان کے ایک شخص کو سلامتی کونسل کی بلیک لسٹ میں ڈالنے کی کوشش کی گئی ہے ۔امریکہ نے سلامتی کونسل کمیٹی کے سامنے ایک ہفتے پہلے یہ درخواست کی تھی۔ اس کا مقصد تیل خریدنے اور کوئلہ فروخت کرنے کے لئے جاری شمالی کوریا کی غیر قانونی سمندری اسمگلنگ کی سرگرمیوں کو بند کرنا ہے ۔امریکہ نے جوہری اور میزائل پروگرام کے مسئلہ پر شمالی کوریا پر دباؤ بنانے کے لیے اس کے خلاف سب سے بڑی یکطرفہ پابندیاں عائد کی ہیں۔امریکی قرارداد کو روکنے کے لئے چین نے کوئی واضح وجہ نہیں بتائی ہے ۔عام طور پر ایسی روک تب لگائی جاتی ہے جب سلامتی کونسل کا کوئی رکن قرارداد کے سلسلہ میں مزید تفصیلی معلومات مانگے ۔ اس قسم کی روک ہٹائی جا سکتی ہے شمالی کوریا پر پابندی لگانے والی سلامتی کونسل کمیٹی کا کوئی بھی فیصلہ متفقہ طور پر ہی ہوتا ہے ۔ اگر امریکہ کے اس قرارداد کو سلامتی کونسل میں قبول کر لیا جاتا ہے توشمالی کوریا کے 19بحری جہازوں سمیت کل 33 بحری جہازوں کے کسی بھی بندرگاہ میں داخلہ پر عالمی پابندی لگ جائے گی۔ باقی بچے 14 بحری جہازوں کے داخلہ کو روکنے کے لیے ان کا رجسٹریشن ختم کرنا ہوگا۔اس کے علاوہ 27 مجوزہ کمپنیوں اور ایک شخص کی املاک فریز کے تابع رکھا جائے گا۔

TOPPOPULARRECENT