Tuesday , September 25 2018
Home / Top Stories / شمالی ہند میں شدید سردی کی لہر جاری ‘تمام خدمات متاثر

شمالی ہند میں شدید سردی کی لہر جاری ‘تمام خدمات متاثر

جموں و کشمیر ‘ پنجاب ‘ ہریانہ اور قومی دارالحکومت نئی دہلی میں سردی میں اضافہ ‘ دھند سے ضروری خدمات متاثر
نئی دہلی ۔ 7جنوری ( سیاست ڈاٹ کام ) قومی دارالحکومت نئی دہلی میں درجہ حرارت میں تھوڑا سا اضافہ ہوا اور یہ 6.4 درجہ سلسیس ہوگیا ۔ قبل ازیں دارالحکومت دہلی میں درجہ حرارت پورے موسم کا سب سے کم درجہ حرارت ریکارڈ کیا گیا تھا ۔ دھند کی وجہ سے ٹرین خدمات بھی متاثر ہوگئی تھیں ۔ کل کا درجہ حرارت 4.2درجہ سلسیس تھا ۔ دھوپ اور اس کی حدت میں آج تھوڑا سا اضافہ ہوا ‘ چنانچہ دہلی کے شہریوں کو کچھ راحت حاصل ہوئی ۔ سرینگر سے موصولہ اطلاع کے بموجب جموں و کشمیر اور وادی کشمیر کے دیگر مقامات بشمول لداخ کے علاقہ میں جاریہ موسم سرما میں سرد ترین رات کل محسوس کی گئی ۔ ریاست اب بھی شدید سردی کی گرفت میں ہے ۔ محکمہ موسمیات کے دفتر پیش قیاسی کے دوران آئندہ ہفتہ موسم سرد اور خشک رہے گا ۔ رات کے درجہ حرارت میں مزید کمی واقع ہوگی ۔ لداخ کے علاقہ میں بعض مقامات پر کل رات شدید سردی محسوس کی گئی ۔ درجہ حرارت پورے موسم سرما میں پہلی بار سب سے کم رہا ۔ سرینگر ‘ جموں وکشمیر کا گرمائی دارالحکومت ہے اور یہاں اقل ترین درجہ حرارت 6درجہ سلسیس ہوگیا ہے ۔ کل رات کا درجہ حرارت منفی 1.2درجہ سلسیس تھا ۔ چندی گڑھ سے موصولہ اطلاع کے بموجب پنجاب اورہریانہ کی ریاستیں بھی شدید سردی کی گرفت میں ہیں ۔ اعظم پور دونوں ریاستوں کا سرد ترین مقام تھا ۔ جہاں درجہ حرارت 0.7 درجہ سلسیس تک پہنچ گیا ۔ ہریانہ میں نارنول سرد ترین مقام تھا جب کہ محکمہ موسمیات کی پیش قیاسی کے بموجب پنجاب اور ہریانہ میں اچانک سردی میں اضافہ ممکن ہے ۔ آج مطلع صاف تھا اور چمکیلی دھوپ دیکھی گئی ۔ پنجاب میں امرتسر میں درجہ حرارت 2.6 درجہ سلسیس تک پہنچ گیا ۔ بھٹنڈا 2.5درجہ سلسیس کے ساتھ پنجاب کا سرد ترین مقام تھا ۔ چندی گڑھ میں رات کا درجہ حرارت 5.8درجہ سلسیس تھا جو معمول سے کم درجہ حرارت تھا ۔ سرسہ میں انتہائی سرد موسم محسوس کیا گیا ‘ درجہ حرارت 2.1درجہ سلسیس تک پہنچ گیا ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT