Friday , January 19 2018
Home / شہر کی خبریں / شمس آباد منڈل کو جلد از جلد پینے کے پانی کی سربراہی کے لیے پرکاش گوڑ کا تیقن

شمس آباد منڈل کو جلد از جلد پینے کے پانی کی سربراہی کے لیے پرکاش گوڑ کا تیقن

شمس آباد ۔ 11 ۔ دسمبر : ( سیاست نیوز ) : شمس آباد کے موضع نرکھوڈہ میں آسرا پنشن پروگرام منعقد کیا گیا جس میں مہمان خصوصی کی حیثیت سے راجندر نگر رکن اسمبلی ٹی پرکاش گوڑ نے شرکت کرتے ہوئے پنشنرس میں پنشن کی رقم تقسیم کی ۔ اس موقع پر انہوں نے اپنی مخاطبت میں کہا کہ ٹی آر ایس حکومت اقتدار پر آتے ہی تقریبا پنشن منسوخ کردینے کے بعد کانگریس اور ت

شمس آباد ۔ 11 ۔ دسمبر : ( سیاست نیوز ) : شمس آباد کے موضع نرکھوڈہ میں آسرا پنشن پروگرام منعقد کیا گیا جس میں مہمان خصوصی کی حیثیت سے راجندر نگر رکن اسمبلی ٹی پرکاش گوڑ نے شرکت کرتے ہوئے پنشنرس میں پنشن کی رقم تقسیم کی ۔ اس موقع پر انہوں نے اپنی مخاطبت میں کہا کہ ٹی آر ایس حکومت اقتدار پر آتے ہی تقریبا پنشن منسوخ کردینے کے بعد کانگریس اور تلگو دیشم پارٹیوں کی جانب سے سخت احتجاج و مطالبہ کرنے کے بعد دوبارہ سروے منعقد کرتے ہوئے پنشن کو منظور کیا گیا ہے ۔ شمس آباد کے موضع نرکھوڈہ میں 330 پنشنرس میں سے 303 پنشنرس کو رقم منظور کی گئی ۔ انہوں نے کہا کہ عوام کے مسائل کو حل کرنے کے لیے راجندر نگر حلقہ میں کانگریس اور تلگو دیشم پارٹی مل کر حکومت سے مطالبہ اور احتجاج کرتے ہوئے مسائل کو حل کرائیں گے ۔ انہوں نے تیقن دیا کہ جلد از جلد شمس آباد منڈل کو پینے کے پانی کی سربراہی کے لیے بھی اقدامات کئے جائیں گے ۔ جس سے منڈل کی ترقی میں رکاوٹ پیدا ہورہی ہے ۔ GO111 منسوخ کرنے کے بعد ہی شمس آباد منڈل کی ترقی ہوگی جی او کی منسوخی کے لیے حکومت سے مطالبہ کیا جائے گا ۔ چکلہ ایلیا منڈل پریشد صدر نے کہا کہ کے چندر شیکھر راؤ اقتدار حاصل کرنے کے بعد سروے کے نام پر راشن کارڈس کو منسوخ کردیا ۔ کانگریس اور تلگو دیشم کے مسلسل احتجاج پر کے سی آر حکومت خوف زدہ ہوگئی اور دوبارہ سروے کرواتے ہوئے پنشن کو دوبارہ منظور کیا ۔ بی ستیش زیڈ پی ٹی سی ممبر شمس آباد نے اپنی مخاطبت میں کہا کہ 2006 میں نرکھوڈہ میں صرف 80 افراد میں پنشن تقسیم کیا جاتا تھا کانگریس حکومت اقتدار پر آنے کے بعد یہاں 300 سے زائد افراد کو پنشن منظور کیا گیا ۔ عوام اپنی کھیتی کی زمین فروخت کر کے پختہ مکانات تعمیر کر کے ایک چھوٹی کار خرید رہے تھے ۔ جب یہاں زمین کی قیمتیں آسمان کو چھو رہی تھی لیکن رئیل اسٹیٹ کاروبار نہ ہونے کی وجہ سے یہاں سب تبدیل ہوگیا ہے ۔ صرف مکانات اور گاڑیاں باقی رہ گئی ہیں ۔ ایسے میں غریب عوام کے پنشن کو منسوخ کیا گیا تھا ۔ مسلسل احتجاج کرنے کے بعد دوبارہ سروے کروا کر پنشن کو بحال کیا گیا ۔ اس موقع پر ایم پی ڈی او سریکانت ریڈی ، وجئے لکشمی نرکھوڈہ سرپنچ ، بی وینوگوپال تلگو دیشم جنرل سکریٹری ، گیانیشور اور ایم پی ٹی سی ممبر کے علاوہ دیگر افراد موجود تھے ۔۔

TOPPOPULARRECENT