Sunday , December 17 2017
Home / عرب دنیا / شوہر پابند صوم و صلوٰۃ نہیں تھا سعودی بیوی نے شادی کے 5 دن میں خلع لے لیا

شوہر پابند صوم و صلوٰۃ نہیں تھا سعودی بیوی نے شادی کے 5 دن میں خلع لے لیا

منامہ ۔ /5 مئی (سیاست ڈاٹ کام) شوہر کے بے نمازی ہونے پر مایوس سعودی بیوی نے شادی کے 5 دن کے بعد خلع لے لیا ۔ شادی کے بعد جب خاتون کو پتہ چلا کہ اس کا شوہر صوم و صلوٰۃ کا پابند نہیں ہے اور نہ ہی اس میں دینی مزاج پایا جاتا ہے ۔ اس پر بیوی نے شوہر پر برہمی ظاہر کردی اور خلع کا اعلان کردیا ۔ سعودی نیوز سائیٹ المرشد نے یہ رپورٹ شائع کی ہے ۔ اس خاتون کے فیصلے سے سوشیل میڈیا پر زبردست بحث چھڑگئی ہے ۔ جن لوگوں نے سعودی خاتون کے فیصلے کو درست قرار دیا ہے اور جن لوگوں نے اس فیصلے کی مخالفت کی ہے دونوں جانب بحث چل رہی ہے ۔ اسلام میں واضح طور پر بتایا گیا ہے کہ ہر مسلمان پر نماز فرض کردی گئی ہے ۔ بلاشبہ اس خاتون نے ایسے شوہر کے ساتھ زندگی گزارنے سے انکار کردیا جو اسلامی زندگی کے مقاصد کو پورا نہیں کررہا تھا ۔ سوشیل میڈیا پر تبصرے کرنے والوں نے لکھا ہے کہ اگر بیوی نے محسوس کیا کہ اس کا شوہر ایک دیندار مسلمان نہیں ہے تو اسے چاہئیے تھا کہ وہ اسے خودکو درست کرنے کا موقع دیتی ۔ اس نے جلد بازی میں فیصلہ کرلیا ہے ۔ ایک اور شہری کا خیال ہے کہ شادی ایک اہم رشتہ ہے ۔ دونوں میاں بیوی کے درمیان ایک دوسرے کے جذبات کا احترام کرنا ہی ازدواجی زندگی کو خوشگوار بناسکتا ہے ۔ ایسے کئی لوگ ہیں جو روزانہ پانچ وقت کی نماز ادا کرتے ہیں لیکن وہ لوگ اپنی بیویوں کے ساتھ بہتر حسن سلوک نہیں رکھتے ۔ میرا ایقان ہے کہ اس خاتون کو جلد بازی سے کام نہیں لینا چاہئیے تھا ۔

TOPPOPULARRECENT