Tuesday , November 21 2017
Home / ہندوستان / شہریت و رائے دہی کے حق کو ختم کیا جائے

شہریت و رائے دہی کے حق کو ختم کیا جائے

متنازعہ نعرہ سے انکار کرنا جرم ۔ شیوسینا کے ترجمان کا اداریہ
ممبئی 17 ماچر ( سیاست ڈاٹ کام ) بھارت ماتا کی جئے کہنے سے انکار پر مجلسی لیڈر اسد الدین اویسی پر تنقید کرتے ہوئے شیوسینا نے آج کہا کہ جو لوگ یہ نعرہ کہنے سے انکار کرتے ہیں کہ ان کی شہریت منسوخ کی جانی چاہئے اور ان کے حق رائے دہی کو سلب کیا جانا چاہئے ۔ شیوسینا نے چیف منسٹر مہاراشٹرا سے یہ بھی دریافت کیا کہ جب اسد اویسی نے یہ نعرہ کہنے سے انکار کردیا تھا تو انہیں ریاست سے باہر جانے کس طرح دیا گیا ۔ پارٹی ترجمان سامنا کے ایک اداریہ میں سینا نے کہا کہ ہاردک پٹیل نے قومی پرچم کی ہتک کرنے کی غلطی کی تھی اور اس پر غداری کا الزام عائد کیا گیا ۔ وہ ابھی تک جیل میں ہے ۔ کیا اسد اویسی مادر ہند کی ہتک کرتے ہوئے غداری کے مرتکب نہیں ہوئے ہیں ؟ ۔ اداریہ میں کہا گیا ہے کہ جو لوگ یہ نعرہ لگانے سے انکار کرتے ہیں ان کی شہریت کو منسوخ کرنا اور ان کے رائے دہی کے حق کو سلب کرنے کی ضرورت ہے ۔ کہا گیا ہے کہ ریاست مںے بی جے پی کے چیف منسٹر ہیں اور انہیں یہ جواب دینا چاہئے کہ اویسی نے لاتور میں مادر ہند کی توہین کی ہے اور انہیں ریاست سے باہر کس طرح جانے دیا گیا ۔ سینا نے کہا کہ اقلیتی برادری اسی لئے پسماندہ ہے کہ وہ اویسی جیسے لوگوں کے نظریات کی تائید کرتی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT