Wednesday , November 22 2017
Home / شہر کی خبریں / شہر میں اومنی ویانس کلچر ، طلبہ کی زندگی کو خطرہ

شہر میں اومنی ویانس کلچر ، طلبہ کی زندگی کو خطرہ

قواعد کی خلاف ورزی کرنے والی گاڑیوں کی ضبطی ، جوائنٹ ٹرانسپورٹ کمشنر کا بیان
حیدرآباد ۔ 22 ۔ فروری : ( سیاست نیوز) : شہر میں اسکول مینجمنٹس تمام علاقوں تک طلبہ کو ٹرانسپورٹ سہولت فراہم کرنے سے قاصر ہیں اور سرپرستوں کے لیے اس کے سوا کوئی اور چارہ کار نہیں ہے کہ وہ اپنے بچوں کو خانگی اومنی ویانس میں اسکولس بھیج رہے ہیں ۔ اس طرح بچوں کی جان خطرہ میں ڈالی جارہی ہے ۔ ایسی بیشتر ویانس میں فرسٹ ایڈ کی سہولت نہیں ہے اور یہ ویانس قواعد کی خلاف ورزی کرتے ہوئے ایل پی جی گیس سے چلائی جارہی ہیں ۔ گذشتہ سال اکٹوبر میں اسکولی بچوں کو لے جارہی ماروتی ویان میں گیس سیلنڈر پھٹنے سے آگ لگ گئی تھی خوش قسمتی سے اس وقت کوئی ہلاکت اس لیے نہیں ہوئی کہ یہ دھماکہ بچوں کو اسکول میں چھوڑ دینے کے بعد ہوا تھا ، یہ شکایات عام ہیں کہ اومنی ویانس چلانے والے بیشتر ڈرائیورس کے پاس ویانس چلانے کے لائسنس نہیں ہیں۔ ان ویانس کو اسکول ٹرانسپورٹ کا پرمٹ بھی حاصل نہیں ہے ۔ جوائنٹ ٹرانسپورٹ کمشنر ویجلنس بی وینکٹیشورلو نے کہا کہ آر ٹی اے کے حکام روزانہ قواعد کی پابندی نہ کرنے والی 15 گاڑیاں ضبط کررہے ہیں ۔ محکمہ ٹرانسپورٹ اومنی ویانس کو تعلیمی اداروں کے زمرہ کے تحت لانے کا کوئی ارادہ نہیں رکھتا ۔ مہاراشٹرا میں اومنی ویانس کو ایسی اجازت دی گئی ہے ۔۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT