Wednesday , December 12 2018

شہر میں پینے کے پانی کے مسائل کی مستقل یکسوئی کیلئے اقدامات

اوٹر رنگ روڈ پر گرڈ کی تعمیر کا فیصلہ ، کے ٹی آر کا بیان

حیدرآباد۔ 25 مارچ (سیاست نیوز ؍ این ایس ایس) وزیر بلدی نظم و نسق کے ٹی راما راؤ نے قانون ساز کونسل کو آج مطلع کیا کہ ریاستی حکومت حیدرآباد میں پینے کے پانی کے مسائل کو مستقل بنیادوں پر حل کرنے کیلئے اقدامات کررہی ہے۔ کے ٹی آر نے وقفہ سوالات کے دوران کہا کہ شہری بلدی ادارہ (جی ایچ ایم سی) شہریان حیدرآباد کی پیاس بجھانے کیلئے اقدامات کا آغاز کرچکا ہے۔ شہر میں پینے کے پانی کے مسئلہ سے نمٹنے کیلئے اوٹر رنگ روڈ کے اطراف بین رابطہ گرڈ تعمیر کی جائے گی۔ دونوں شہروں کے 21 لاکھ خاندانوں کو پینے کا صاف پانی فراہم کرنے کیلئے یہ گرڈ کرشنا اور گوداوری جیسی دو بڑی ندیوں کو مربوط کرے گی۔ کے ٹی آر نے کہا کہ شہر کے عوام کی پیاس بجھانے کیلئے منصوبے بنائے گئے ہیں اور ضروری اقدامات کئے جارہے ہیں، چنانچہ عوام کو خوف و سنسنی کا شکار ہونے کی ضرورت نہیں ہے۔ وزیر بلدی نظم و نسق نے کہا کہ جی ایچ ایم سی حیدرآباد کے شہریوں کو یومیہ فی کس 150 لیٹر پانی سربراہ کررہا ہے۔ علاوہ ازیں کرشنا، گوداوری، مانجیرا اور سنگور سے 448 ایم جی ڈی پانی لانے کے انتظامات کئے جارہے ہیں۔ عہدیداروں کو متعلقہ کاموں کو تیز رفتاری کے ساتھ مکمل کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔

TOPPOPULARRECENT