Monday , November 20 2017
Home / شہر کی خبریں / شہر میں کچرے کی نکاسی کیلئے 1005آٹو ٹرالیوں کی حوالگی

شہر میں کچرے کی نکاسی کیلئے 1005آٹو ٹرالیوں کی حوالگی

کچرادانوں کی تقسیم ‘ پانی کی قلت سے نمٹنے دوذخائر آب کی تعمیر کا فیصلہ ‘ کے سی آر کا خطاب
حیدرآباد ۔ 9 ۔ نومبر : ( این ایس ایس ) : شہر کو صاف ستھرا رکھنے گرین اور بلیو ڈسٹ بنس کے استعمال کو عام کرنے کے سلسلہ میں چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے آج یہاں پیپلز پلازا ، نیکلس روڈ پر 1005 کچرا اٹھانے والی گاڑیوں کو جھنڈی دکھائی اور چند استفادہ کنندگان میں ڈسٹ بنس تقسیم کئے ۔ اس موقع پر مخاطب کرتے ہوئے چیف منسٹر نے سابق حکمرانوں پر صدیوں قدیم حیدرآباد کو تباہ کرنے کا الزام عائد کیا ۔ انہوں نے کہا کہ موتیوں کے شہر میں آندھرا کے حکمرانوں نے کافی مشکلات پیدا کئے اور اسے نقصان پہنچایا اور اب ہم کو اس شہر کی صفائی کے لیے اقدامات کرتے ہوئے اور ڈسٹ بنس اور ٹرالیز فراہم کرتے ہوئے اس کو ترقی دینا ہے ۔ چیف منسٹر نے شہر کے مسائل کو حل کرنے میں ناکامی کے لیے سابق حکومتوں کو اپنی شدید تنقید کا نشانہ بنایا ۔ کارس کی خراب صورتحال پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے ، جو موسم بارش میں سڑکوں پر کشتیاں بن رہی ہیں ، چیف منسٹر نے کہا کہ اس مسئلہ پر قابو پانے کے لیے انہوں نے تمام سیاسی جماعتوں سے بات چیت کی ہے اور ڈسٹ بنس اور کچرا حاصل کرنے والی ٹرالیز کو تقسیم کرتے ہوئے شہر میں صفائی کے لیے اقدامات شروع کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ کے سی آر نے کہا کہ تاریخی شہر حیدرآباد کو مستقبل قریب میں ایک عالمی درجہ کے شہر میں تبدیل کرنے کے لیے کاوشیں کی جائیں گی ۔ انہوں نے کہا کہ ان دو ڈسٹ بنس میں گرین ڈسٹ بن گیلا کچرا ڈالنے کے لیے ہوگا اور بلیو ڈسٹ بن خشک کچرے کے لیے ہوگا ۔ انہوں نے عوام سے اس کا مناسب انداز میں استعمال کرنے کی اپیل کی ۔ شہر کے دیگر مسائل پر اپنی توجہ مبذول کرتے ہوئے چیف منسٹر چندر شیکھر راؤ نے کہا کہ دونوں شہروں کی تمام سڑکوں کو آئینہ کی طرح بنایا جائے گا اور اس ماہ کے ختم تک پانچ لاکھ ڈسٹ بنس تقسیم کئے جائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ اب ہم کو شہر سے غربت کو دور کرنا ہے اس کے علاوہ پینے کے پانی کے بحران کو حل کرنا ہے اس کے لیے 15TMC گنجائش کے حامل دو ذخائر آب راموجی فلم سٹی اور کیشوا پورم میں تعمیر کیے جائیں گے ۔ اس موقع پر ریاستی وزراء این نرسمہا ریڈی ، ٹی سرینواس یادو ، ٹی پدما راؤ  گوڑ ، مہیندر ریڈی اور دوسرے موجود تھے ۔

TOPPOPULARRECENT