Sunday , April 22 2018
Home / شہر کی خبریں / شہر کے اطراف 1000 رین واٹر ہاروسٹنگ اسٹرکچرس کی تعمیر

شہر کے اطراف 1000 رین واٹر ہاروسٹنگ اسٹرکچرس کی تعمیر

یکم فروری کو وزیر بلدی نظم و نسق کے ٹی راما راؤ پروگرام کا آغاز کریں گے
حیدرآباد ۔ 19 ۔ جنوری : ( این ایس ایس ) : رین واٹر ہاروسٹنگ پروگرام کو ابھارنے کے سلسلہ میں ریاستی حکومت کی جانب شہر کے اطراف بارش کا پانی جمع کرنے کے لیے کوئی ایک ہزار اسٹرکچرس تعمیر کئے جارہے ہیں ۔ وزیر بلدی نظم و نسق اور شہری ترقی کے ٹی راما راؤ یکم فروری کو اس پروگرام کا رسمی طور پر آغاز کریں گے ۔ ٹی ایس آئی آئی سی کی جانب سے IALAs میں کوئی 500 رین واٹر ہاروسٹنگ اسٹرکچرس کی تعمیر شروع کی جائے گی جب کہ جی ایچ ایم سی ، واٹر بورڈ ہر ایک 250 اسٹرکچرس تعمیر کریں گے ۔ ڈی ایم اے سے شہر کے اطراف تمام سات یو ایل بیز میں مزید 250 اسٹرکچرس کی تعمیر شروع کرنے کے لیے کہا گیا ہے ۔ محکمہ بلدی نظم و نسق اور شہری ترقی کے پرنسپال سکریٹری اروند کمار نے آج واٹر سپلائی بورڈ ، جی ایچ ایم سی ، ڈی ایم اے ، ٹی ایس آئی آئی سی اور گراونڈ واٹر ڈپارٹمنٹ کے عہدیداروں کے ساتھ ایک اجلاس منعقد کیا اور رین واٹر اسٹرکچرس کے سلسلہ میں اصول و قواعد پر تبادلہ خیال کیا ۔ انہوں نے پانی کے تحفظ اور زیر زمین پانی کی سطح میں بہتری کے لیے جس سے بورویلس میں پانی کی مقدار میں بہتری ہوگی ۔ عوام میں بیداری پیدا کرنے کی ضرورت پر زور دیا ۔ انہوں نے کہا کہ تمام ہاروسٹنگ اسٹرکچرس کے لیے ایک یکساں ڈیزائن بنایا جانا چاہئے ایک منفرد لوگو کے ساتھ ۔ اسٹرکچرس کی نشاندہی کے لیے ڈسپلے بورڈس لگائے جائیں اور ان کا مینٹیننس مناسب فینسنگ کے ساتھ کیا جانا چاہئے ۔ انہوں نے عہدیداروں سے تمام اسٹرکچر کی میاپنگ اور جیوٹیاگنگ کرنے کے لیے بھی کہا ۔ ناکارہ رین واٹر اسٹرکچر کو دوبارہ کارآمد بنانے کے اقدامات کئے جانے چاہئے ۔ انہوں نے کہا کہ ان اسٹرکچرس کے مینٹیننس کے لیے عوام کی حوصلہ افزائی کی جانی چاہئے اور کہا کہ جی ایچ ایم سی کے تمام 3000 کمیونٹی ریسورس پرسنس اور سوچھ سیوکس کو اس سلسلہ میں عوام میں بیداری پیدا کرنے کے لیے شامل کیا جانا چاہئے ۔ واٹر بورڈ کے ایم ڈی دانا کشور نے تجویز پیش کی اس پروگرام کے تمام مراحل میں بلڈرس ، این جی اوز اور تعلیمی اداروں کو شامل کیا جائے اور مینٹیننس کی اہمیت کو اجاگر کیا جائے ۔ انہوں نے کہا کہ خانگی غیر مجاز بورویلس اور پانی کو تجارتی طور پر فروخت کرنے والوں کی نشاندہی کی جائے اور رین واٹر ہارویسٹنگ اسٹرکچرس کی تعمیر پر زور دیا جائے ۔ اس اجلاس میں کمشنر جی ایچ ایم سی جناردھن ریڈی ، ڈی ایم اے ٹی کے سری دیوی اور دوسرے عہدیداروں نے شرکت کی ۔۔

TOPPOPULARRECENT