Monday , September 24 2018
Home / دنیا / شیربہادر دیوبا مستعفی، اولی نیپال کے نئے وزیراعظم

شیربہادر دیوبا مستعفی، اولی نیپال کے نئے وزیراعظم

کھٹمنڈو ۔ 15 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) وزیراعظم نیپال شیربہادر دیوبا نے آج اپنے عہدہ سے استعفیٰ دیدیا اس طرح اب بائیں بازو کے اتحاد کو نئی حکومت تشکیل دینے کی راہ ہموار ہوگئی ہے۔ یاد رہیکہ صرف دو ماہ قبل ہی منعقد کئے گئے مقامی مجالس اور پارلیمانی انتخابات میں ان کی پارٹی نے ناقص مظاہرہ کیا تھا۔ 6 جون کو دیوبا نے نیپال کے 40 ویں وزیراعظم کی حیثیت سے عہدہ سنبھالاتھا جس کیلئے انہیں سی پی این (ماؤسٹ سنٹر) کی بھی تائید حاصل تھی جو اب بائیں بازو کے اتحادکا حصہ ہے اور اب سی پی این ۔ یو ایم ایل میں انضمام کی خواہاں ہے۔ انہوں نے ٹیلیویژن پر اپنے خطاب کے دوران کہا کہ میری قیادت میں انتخابات کا انتہائی کامیابی کے ساتھ انعقاد ہوا اور اس طرح انہوں نے اقتدار کی پرامن منتقلی کی راہ ہموار کردی ہے۔ سرکاری طور پر دیوبا آج اپنا استعفیٰ ملک کے صدر کو پیش کریں گے۔ دوسری طرف بائیں بازو کے اتحاد نے نئی حکومت کی تشکیل کے لئے صدر کو پہلے ہی اپنا دعویٰ پیش کردیا ہے جس کے تحت یو ایم ایل صدرنشین کی پی شرما اولی ملک کے نئے وزیراعظم ہوں گے۔ دریں اثناء نیپال کے الیکشن کمیشن کے ذرائع نے بتایا کہ ہمالیائی قوم کی اولین خاتون صدر بدیا دیوی بھنڈاری کی جگہ نئے صدر نیپال کا انتخاب 5 مارچ کو کیا جائے گا اور نائب صدر 16 مارچ کو منتخب کئے جائیں گے۔ تازہ ترین اطلاع کے مطابق سی پی این ۔ پی ایم ایل صدرنشین کے پی شرما اولی دوسری بار نیپال کے وزیراعظم بن گئے۔ صدر بدیادیوی بھنڈاری نے 65 سالہ اولی کو ملک کا 41 واں وزیراعظم مقرر کیا جو اپنی چین حامی پالیسی کے لئے جانے جاتے ہیں۔ قبل ازیں انہوں نے 11اکٹوبر 2015ء تا 3 اگست 2016ء ملک کے وزیراعظم کی حیثیت سے فرائض انجام دیئے تھے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT