Wednesday , December 12 2018

شیوسینا ایم پیز وزیر اعظم کی دعوت میں شریک ہونگے

ممبئی 24 اکٹوبر ( سیاست ڈاٹ کام ) دوبارہ مصالحت کے اشاروں کے درمیان شیوسینا کے تمام ارکان پارلیمنٹ اتوار کو وزیر اعظم نریندر مودی کی جانب سے این ڈی اے ایم پیز کیلئے منعقد کی جانے والی چائے کی دعوت میں شرکت کرینگے جبکہ شیوسینا نے یہ وضاحت کردی ہے کہ پارٹی سربراہ ادھو ٹھاکرے اس دعوت میں شرکت نہیں کرینگے ۔ پارٹی نے کہا کہ چونکہ یہ دعوت بر

ممبئی 24 اکٹوبر ( سیاست ڈاٹ کام ) دوبارہ مصالحت کے اشاروں کے درمیان شیوسینا کے تمام ارکان پارلیمنٹ اتوار کو وزیر اعظم نریندر مودی کی جانب سے این ڈی اے ایم پیز کیلئے منعقد کی جانے والی چائے کی دعوت میں شرکت کرینگے جبکہ شیوسینا نے یہ وضاحت کردی ہے کہ پارٹی سربراہ ادھو ٹھاکرے اس دعوت میں شرکت نہیں کرینگے ۔ پارٹی نے کہا کہ چونکہ یہ دعوت برسر اقتدار این ڈی اے اتحاد کے صرف ارکان پارلیمنٹ کیلئے ہے اس لئے ادھو ٹھاکرے شرکت نہیں کرینگے ۔ اس دوران آر پی آئی لیڈر رام داس اٹھاؤلے نے کہا کہ چیوسینا سربراہ ادھو ٹھاکرے مہاراشٹرا میں بی جے پی کے ساتھ حکومت سازی میں دلچسپی رکھتے ہیں۔ مودی کابینہ میں شیوسینا کے نمائندے اننت گیتے نے کہا کہ وہ خود اور شیوسینا کے تمام ارکان پارلیمنٹ نریندر مودی کی چائے کی دعوت میں شرکت کرینگے ۔

شیوسینا کے ایک اور لیڈر نے کہا کہ یہ دعوت صرف این ڈی اے حلیفوں کے ارکان پارلیمنٹ کیلئے ہے اور چونکہ ادھو ٹھاکرے رکن پارلیمنٹ نہیں ہیں تو پھر ان کو دعوت دئے جانے کا سوال ہی کہاںپیدا ہوتا ہے ۔ یہ پوچھے جانے کے قابل سوال ہی نہیں ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ایسا نہیں ہے کہ این ڈی اے کے دوسرے قائدین کو مدعو کیا گیا ہے اور ادھو ٹھاکرے کو نظر انداز کردیا گیا ہو۔ انہوں نے کہا کہ ایسا نہیں ہے کہ چیف منسٹر پنجاب پرکاش سنگھ بادل کو مدعو کیا گیا ہے اور ادھو ٹھاکرے کو نہیں کیا گیا ۔ چونکہ مرکزی وزیر رام ولاس پاسوان رکن پارلیمنٹ ہیں اس لئے وہ دعوت شریک ہونگے ۔ ہمارے ایم پیز کو بھی دعوت آئی ہے اور وہ شرکت کرینگے ۔ انہوں نے کہا کہ اگر ادھو ٹھاکرے وزیر اعظم سے ملاقات کرنا چاہیں تو وہ جائیں گے اور تنہا ملاقات کرینگے ۔ اس کیلئے انہیں ڈنر پر دعوت کی کیا ضرورت ہے ؟ ۔

اس دوران آر پی آئی کے لیڈر رام داس اٹھاؤلے نے کہا کہ شیوسینا سربراہ بی جے پی کے ساتھ مہاراشٹرا حکومت بنانے میں گہری دلچسپی رکھتے ہیں اور اس میں کوئی شک نہیں ہے کہ سینا ۔ بی جے پی اتحاد بحال ہوگیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ادھو ٹھاکرے نے ان سے کہا ہے کہ وہ بی جے پی کے ساتھ مہاراشٹرا کی نئی حکومت بنانے میں دلچسپی رکھتے ہیں۔ آئندہ دو دن میں اس تعلق سے بات چیت ہوگی اس کے بعد قلمدانوں کی تقسیم کے تعلق سے انکشاف کیا جائیگا ۔ تاہم اس میں کوئی شک نہیں ہے کہ سینا ۔ بی جے پی اتحاد بحال ہوا ہے ۔ ادھو ٹھاکرے بی جے پی کی تائید کرنے پوری طرح تیار ہیں۔

TOPPOPULARRECENT